Char O Nachar Baat Karne Lage

چارو ناچار بات کرنے لگے

چارو ناچار بات کرنے لگے

درو دیوار بات کرنے لگے

زیب دیتی ہے جن کو آسانی

وہ بھی، دشوار بات کرنے لگے

زخم تُو شور برپا کر دینا

جب وہ بیمار بات کرنے لگے

ایسے کرتا ہے بات، وہ ہم سے

جیسے تلوار، بات کرنے لگے

رات کے راہی دھوپ میں آئے

صبح آثار، بات کرنے لگے

جراُتِ آئینہ نہیں جن میں

پسِ زنگار ،بات کرنے لگے

عکس در عکس ایک صورت سے

آئینہ وار، بات کرنے لگے

وہ جو کرتے تھے کام کی باتیں

وہ بھی بیکار بات کرنے لگے

بولی ء نقدِ جاں بڑھا دو گے؟

جب خریدار بات کرنے لگے

اس کے ہاتھوں پہ اشرفی رکھنا

جب وہ نادار بات کرنے لگے

شائستہ سحر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1050) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Shaista Sehar, Char O Nachar Baat Karne Lage in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 55 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Shaista Sehar.