Tera Deedar Kere Tujh Se Miley Eid Ke Din

تیرا دیدار کرے تجھ سے ملے عید کے دن

تیرا دیدار کرے تجھ سے ملے عید کے دن

اور کیا اس کےسوا کوئی کرے عید کے دن

جوجھتے رہتے ہیں ہر دم جو دکھوں سے تنہا

کوئی ان کی بھی تو روداد سنے عید کے دن

صبح سے اک یہی امّید کہ آ کر کوئی

ہم غریبوں کی بھی امداد کرے عید کے دن

باز آئیں گے نہ ہم دل کی کرینگے اب تو

کوئی جلتا ہے اگر ہم سے جلے عید کے دن

فردِ تنہا میں بھلا جشن مناتا کیسے

میرے اپنے ہی مرے ساتھ نہ تھے عید کے دن

وقت نے ہر گھڑی، ہر گام ستایا مجھ کو

بڑھ کے کوئی تو مجھے اپنا کہے عید کے دن

شاؔد ہر اک کو میسر ہیں خوشی کی سوغات

میرے غم کی بھی ذرا شام ڈھلے عید کے دن

شمشاد شاد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(597) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Shamshad Shad, Tera Deedar Kere Tujh Se Miley Eid Ke Din in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 10 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Shamshad Shad.