Pyari Ammi Jaan Ke Naam Alwidai Bosa

پیاری امی جان کے نام الوداعی بوسہ

سلگتے صحرا کے جب سفر پر

میں گھر سے نکلا

تو میری ماں نے

یوں میرے ماتھے پہ ہونٹ رکھے تھے

اُس نے ایسے دیا تھا بوسہ

کہ میرے سارے بدن میں جس نے

مہک میں ڈوبا

دھنک سا رنگین پیار ۔۔۔۔ امرت سا بھر دیا تھا

مجھے جو سرشار کر گیا تھا

فضا میں خاموش سی دعا سے

عجیب سا رنگ بھر دیا تھا

عجب خوشی تھی عجیب دکھ تھا

کہ تپتے صحرا کی ریت جیسے تھے ہونٹ اس کے

اور اس کی آنکھیں سلگ رہی تھیں

لبوں پہ چپ اور کلام کرتی سی گفتگو تھی

مجھے تھا معلوم اور اسے بھی

کہ دور ہوتے ہی ٹوٹ جائیں گے بند سارے

کہ ضبط کے یہ کرے سہارے

نہ روک پائیں گے خشک آنکھوں کی بارشوں کو

وہ بات بے بات رو پڑے گی

میری ماں

سلیمان جاذب

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(395) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Suleman Jazib, Pyari Ammi Jaan Ke Naam Alwidai Bosa in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 23 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Suleman Jazib.