Pehle Pehel Larti Hai Nazar Jab Pehle Pehel Dil Milta Hai

پہلے پہل لڑتی ہے نظر، جب پہلے پہل دل ملتا ہے

پہلے پہل لڑتی ہے نظر، جب پہلے پہل دل ملتا ہے

آنکھیں پتھرا جاتی ہیں،دل کیا ہے کلیجہ ملتا ہے

گلشنِ اُلفت وہ گلشن ہے جسکا بھروسہ کوئی نہیں

نت نئی باتیں ہوتی ہیں ہر لمحہ نیا گل کھلتا ہے

جی گھبرانے لگتا ہے خود ہاتھ اُلجھنے لگتے ہیں

ہوتا ہے دامن کو رفو جب چاکِ گریباں سلتا ہے

اُن سے کہا جو مرتا ہوں میں کہنے لگے بس چپ رہئے

ہم سے نہ ایسی باتیں کیجے، دل سینے میں ہلتا ہے

ان کی باتیں یاد آتی ہیں ۔ جب بھی چٹکتی ہیں کلیاں

ان کا ہنسنا یاد آتا ہے پُھول جو کوئی کِھلتا ہے

مُنھ پہ بھلائی پیٹھ کے پیچھے دکھڑے رونا یہ کیا

ہم تو بُرے ہیں دنیا بھر سے پھر کیوں کوئی ملتا ہے

اُن کی جُدائی میں اے عالم جانے کیا بے چینی ہے

بھرتا ہوں جب ٹھنڈی سانسیں کچھ سینے میں چھلتا ہے

سید عالم واسطی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(444) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Syed Alam Wasti, Pehle Pehel Larti Hai Nazar Jab Pehle Pehel Dil Milta Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 32 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Syed Alam Wasti.