Qismat Bigri Duniya Ujri Aram Se Jeena Bhool Gaye

قسمت بگڑی، دُنیا اجڑی، آرام سے جینا بُھول گئے

قسمت بگڑی، دُنیا اجڑی، آرام سے جینا بُھول گئے

یا یوں کہئے اُن پر مر کے، جینے کا قرینا بُھول گئے

اُلفت کی سہانی راہوں میں ارمان بھرا دل کھو بیٹھے

کیا جانے وہ کیا منزل تھی جہاں ہم ایسا خزینا بھول گئے

کچھ اور سبب عریانی کا، اے قسمت عُریاں، کیا کہئے

یوں چاک گریباں میں اُلجھے دامن کو سینا بُھول گئے

میخانے میں آئے خوش خوش ہم، ساقی نے کئے کچھ ایسے کرم

اِک اشک تو بینا یاد رہا، تھا جو کچھ پینا بھول گئے

طوفاں سے بھلا کیا بس چلتا، قسمت میں لکھی تھی غرقابی

موجوں کے طلاطم میں پھنس کے ہم اپنا سفینا بھول گئے

اے دوست بھرے میخانے میں ناکامِ تمنّا رہنا تھا

لبریز وہ ساغر چُھوٹ گیا چھلکی ہوئی مینا بُھول گئے

افسردہ چمن میں اے عالم، وہ جانِ بہاراں کیا آیا

رحمت برسی یوں پُھول کھلے، ساون کا مہینا بُھول گئے

سید عالم واسطی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(606) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Syed Alam Wasti, Qismat Bigri Duniya Ujri Aram Se Jeena Bhool Gaye in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 32 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Syed Alam Wasti.