Yeh Raat Aakhri Lori Sunanay Wali Hai

یہ رات آخری لوری سنانے والی ہے

یہ رات آخری لوری سنانے والی ہے

میں تھک چکا ہوں مجھے نیند آنے والی ہے

ہنسی مذاق کی باتیں یہیں پہ ختم ہوئیں

اب اس کے بعد کہانی رلانے والی ہے

اکیلا میں ہی نہیں جا رہا ہوں بستی سے

یہ روشنی بھی مرے ساتھ جانے والی ہے

جو نقش ہم نے بنائے تھے صرف وہ ہی نہیں

ہوائے دشت ہمیں بھی مٹانے والی ہے

ابھی تو کوئی بھی نام و نشاں نہیں اس کا

ہمیں جو موج کنارے لگانے والی ہے

ہر ایک شخص کا یہ حال ہے کہ جیسے یہاں

زمین آخری چکر لگانے والی ہے

اظہر عباس

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(927) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Syed Azhar Abbas, Yeh Raat Aakhri Lori Sunanay Wali Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 18 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Syed Azhar Abbas.