Bah Hazour Imam Aali Maqam

بہ حضور امام عالی مقام

لگتا ہے یوں کہ عقل پہ پرکھا نہیں گیا

قرآں کو رٹ لیا گیا سوچا نہیں گیا

ہوتا نہ پھر طلاقِ ثلاثہ میں کوئی پیچ

سچ یہ ہے آیتوں کو سنبھالا نہیں گیا

قرآں کی نص سے چیزیں جو واضح تھیں دوستوں

ان پر بھی اختلاف ہمارا نہیں گیا

جو معترض ہے اب بھی عزائے حسین کا

اس تک تو دینِ حق کا اجالا نہیں گیا

معتوب ہی رہا وہ فرشتہ تمام عمْر

جب تک درِ حسین پہ لایا نہیں گیا

حر آ گیا ادھر سے ادھر حق کی جیت ہے

باطل کی سمت ایک بھی بندا نہیں گیا

دنیا میں اسکی خواہشِ فردوس رہ گئی

"جو شخص کربلائے معلیٰ نہیں گیا"

شارب نمازیں پڑھتے ہوئے عمر ہو چلی

لیکن عبادتوں میں بھٹکنا نہیں گیا

سید اقبال رضوی شارب

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1328) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Syed Iqbal Rizvi Sharib, Bah Hazour Imam Aali Maqam in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Islamic Urdu Poetry. Also there are 17 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Islamic poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Syed Iqbal Rizvi Sharib.