Aik Ik Baat Ka Pata Hai Mujhe

ایک اک بات کا پتا ہے مجھے

ایک اک بات کا پتا ہے مجھے

سارے حالات کا پتا ہے مجھے

میں نے دیکھے ہیں سب نشیب و فراز

جیت اور مات کا پتا ہے مجھے

اپنی کمزوریوں سے واقف ہوں

اپنی اوقات کا پتا ہے مجھے

تو ابھی منزل گمان میں ہے

تیرے شبہات کا پتا ہے مجھے

بے سکونی نظر میں ہے تیری

تیرے دن رات کا پتا ہے مجھے

ہاتھ ہے ایک ذات کا مجھ پر

اور اس ذات کا پتا ہے مجھے

سید ضیاء الدین نعیم

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(836) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Syed Ziyauddin Naeem, Aik Ik Baat Ka Pata Hai Mujhe in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 10 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Syed Ziyauddin Naeem.