Chaand Ghabra Ke Daikhta Hai Mujhe

چاند گھبرا کے دیکھتا ہے مجھے

چاند گھبرا کے دیکھتا ہے مجھے

آسماں آئنہ لگا ہے مجھے

اتنی ویران کیوں ہیں یہ آنکھیں

ان کے اس پار جھانکنا ہے مجھے

میرا دل باغ میں نہیں لگتا

اک گھنے پیڑ کی دعا ہے مجھے

کل کے بارے میں سوچتا بھی نہیں

یہ’ ارادہ‘ تو اک سزا ہے مجھے

اک بشر پر بڑی ہنسی آئی

مجھ سے بولا وہ چاہتا ہے مجھے

شب کے اک پر سکوں سے لمحے نے

کتنا بے چین کر دیا ہے مجھے

عبیدالرحمٰن نیازی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(803) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ubaid Ur Rehman Niazi, Chaand Ghabra Ke Daikhta Hai Mujhe in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 10 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ubaid Ur Rehman Niazi.