Salam

سلام

بہ وقتِ عصر جو کربل کی خاک بیٹھ گئی

کئی دِلوں پہ، کٹے سر کی دھاک بیٹھ گئی

اِدھر زمیں پہ گرا ہاشمی چراغ، اُدھر

فلک پہ سوگ میں اک ذاتِ پاک بیٹھ گئی

بدن جو فرشِ عزا سے اٹھا تو روح وہیں

بہ صد نیاز، بہ صد انہماک، بیٹھ گئی

بہ یادِ سجدہِ تشنہ امام، سجدہ کیا

اور اتنی دیر سے اٹھا کہ ناک بیٹھ گئی

جو بے ردا تھی، اٹھی اور درونِ قصرِ دمشق

بڑے بڑوں کی ردا کر کے چاک، بیٹھ گئی

عدو حُسین کا ہو اور نشان چھوڑے زمیں؟

سنا ہے اس کی لحد، ٹھیک ٹھاک بیٹھ گئی

عمیر نجمی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(2170) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Umair Najmi, Salam in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social, Islamic Urdu Poetry. Also there are 28 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Social, Islamic poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Umair Najmi.