Ghazal

غزل

مری چاہتوں کے سوال پر کوئی مسکرا کے چلا گیا

مجھ پھر سے موسمِ وصل کا وہ حسین خواب دکھا گیا

دلِ میزبان میں رنج کا یہی مدتوں سے ہے سلسلہ

کوئی دن میں آکے ٹہر گیا، کوئی رات رہ کے چلا گیا

وہ ملن کی اولیں ساعتیں، وہ کسی کا لمس عنایتیں

کبھی وہ خمار سے تر ہوا،کبھی مجھ پہ نشہ سا چھا گیا

یہی سوچ کر تو میں دنگ تھا، بھلا میں بھی کیا کوئی سنگ تھا

کہ وہ کارِ خیر سمجھ کے یوں، مجھے راستے سے ہٹا گیا

غمِ عاشقی ہو ترا بھلا، تجھے یاد رکھوں گا میں سدا

اِسی ایک نامِ وفا پہ بس، مجھے بار بار چَھلا گیا

جنہیں رکھا میں نے سنبھال کر، جو تھے جان سے بھی عزیز تر

کبھی سیلِ اشک تھا جوش پر، وہ اُنہی خطوں کو گلَا گیا

عبدالوہاب سخن

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(213) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Poetry of ABDUL WAHAB SUKHAN, Ghazal in Urdu. Also there are 15 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of ABDUL WAHAB SUKHAN.