Ghazal

غزل

عدم سےروغن زیتون لایا جاتا ہے

چراغ ِ اِسم ِ مقدّس جلایا جاتا ہے

فضامیں گونجتارہتاہےشہرعلم کا نام

بصد نیاز سروں کو جھکایا جاتا ہے

یہ دشت ِ عشق مسافت میں بے کنار ہے کیُوں

سنا تھا رات کو خیمہ لگایا جاتا ہے

شراب ہے کہ لہو جام میں سسکتا ہے

الاؤ ہے کہ گھروں کو جلایا جاتا ہے

حضور ہم سے بھی صدقہ ادا نہیں ہوتا

کہاں کسی کے لئے مسکرایا جاتا ہے

زمین پانو تلے سے سِرکتی جاتی ہے

ہمارے سر سے فلک کو اٹھایا جاتا جاتا ہے

غلام آل پیمبر کہیں بھی دفن رہے

زمین کرب و بلا سے اٹھایا جاتا ہے

احمد جہانگیر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(555) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Poetry of Ahmed Jahangir, Ghazal in Urdu. Also there are 6 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmed Jahangir.