Keya Zoororat Hy Hello Hae Ki

کیا ضرورت ہے ہیلو ہائے کی

کیا ضرورت ہے ہیلو ہا ئے کی

میں نہیں ہوں تمہارے پائے کی

دھوپ کا لطف لینے والی ہوں

مجھ کو خواہش نہیں ہے سائے کی

غائبانہ شریک کر کے تمہیں

ایک چسکی بھری ہے چائے کی

اک محبت نہیں وگرنہ تو

گھر میں ہر چیز ہے کرائے کی

مشورہ مفت جو دیا ہے اسے

کوئی وقعت نہیں ہے رائے کی

مستقل کس کا ہے قیام یہاں

دنیا بھی ہے جگہ سرائے کی

حیاء غزل

حیاء غزل

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1124) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Poetry of Haya Ghazal, Keya Zoororat Hy Hello Hae Ki in Urdu. Also there are 4 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Haya Ghazal.