Gazal

غزل

گزشتہ روز کا اخبار تو نہیں ہوں میں

تری حیات میں بے کار تو نہیں ہوں میں

اذیتیں مجھے دیتے ہیں کیوں جہاں والے

کسی کی راہ کی دیوار تو نہیں ہوں میں

وہ مسکرانے کو کہتے ہیں نوکِ نیزہ پر

خیال کیجیے، فنکار تو نہیں ہوں میں

مجھے وہ دیتے ہیں خیرات اپنی یادوں کی

کوئی فقیر یا حق دار تو نہیں ہوں میں

تری کہانی میں کیوں ہر جگہ ہے ذکر مرا

کہ اس کا مرکزی کردار تو نہیں ہوں میں

دُکھوں کے کھیت میں اُگتی ہے میری فصلِ غم

مگر کبیرؔزمیندار تو نہیں ہوں میں

انعام کبیرؔ

انعام کبیر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(822) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Poetry of Inaam Kabeer, Gazal in Urdu. Also there are 6 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Inaam Kabeer.