MENU Open Sub Menu

Teri Tasweer Ko Dekh Kr

تیری تصویرکودیکھ کر

تیری تصویر کو دیکھ کر میں غزل لکھتا ہوں

رات کو دن اور دن کو رات لکھتا ہوں

کسے خبر کہ میں کیا لکھتا ہوں

اپنے دل کے جذبات لکھتا ہوں

اب بھی نہ سمجھو تو نہ سمجھو میری مجبوری

اپنے سارے میں حالات لکھتا ہوں

وہ بکھرے سپنے ٹوٹے ہوئے خواب

میں تو سارے اپنے خیالات لکھتا ہوں

چلو چھوڑو ضد اب لوٹ بھی آؤ آزاد

کہ اب میں تمہاری جیت اپنی ہار لکھتا ہوں

محمد عمران آزاد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(213) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Poetry of M I Azad, Teri Tasweer Ko Dekh Kr in Urdu. Also there are 37 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of M I Azad.