BAAT DIL KI

بات دل کی

بات دل کی میں اپنے کہہ جاتی

کاش یہ درد بھی میں سہہ جاتی

پیار کا تُو جو ہوتا دریا تو

میں ترے ساتھ ساتھ بہہ جاتی

تُو سمجھتا اگر مجھے اپنا

تری پرچھائیں بن کے رہ جاتی

اک اشارے پہ،تیری چوکھٹ پر

عمر ساری میں یونہی رہ جاتی

نہ ہوا جلوہ گر تُو اچھا ہوا

ورنہ تنویرِ مہر و مہ جاتی

کبھی ہوتے نہ اپنی ضد سے جُدا

جو عمارت اَنا کی ڈھ جاتی

نازلی ؔ پہ جو ہوتا دستِ کرم

آبرو کیوں تری اے شہہ جاتی

روبینہ نازلی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(683) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Poetry of RUBINA NAZLEE, BAAT DIL KI in Urdu. Also there are 11 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of RUBINA NAZLEE.