Agaya Phir Se Wohi Aag Laganay Wala

آگیا پھر سے وہی آگ لگانے والا

آگیا پھر سے وہی آگ لگانے والا

مری بستی کے ہر اک گھر کو جلانے والا

نام لے کر میں اُسے کس لیے بدنام کروں

یہیں بیٹھا ہے مرے دل کو دکھانے والا

آج کی رات چراغوں کو جلائے رکھنا

عمر بھر کی میں کہانی ہوں سنانے والا

کوئی سچائی یہاں سننے کو تیار نہیں

ہر جگہ بیٹھا ہے الزام لگانے والا

دیکھتے رہنا ذرا غور سے دنیا والو

دل کے داغوں کو یہ ظالم ہے سجانے والا

ضیا کرناٹکی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1922) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of ZIYA KARNATKI, Agaya Phir Se Wohi Aag Laganay Wala in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 1 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of ZIYA KARNATKI.