Be Murawat Hain To Wapas Hi Utha Le Shab O Roz

بے مروت ہیں تو واپس ہی اٹھا لے شب و روز

بے مروت ہیں تو واپس ہی اٹھا لے شب و روز

مجھ کو بھاتے نہیں یہ تیرے نرالے شب و روز

ایک امید کا تارہ ہے سر بام ابھی

اس کی کرنوں سے ہی ہم نے ہیں اجالے شب و روز

جو تری یاد کے سائے میں گزارے ہم نے

ہیں وہی زیست کے انمول حوالے شب و روز

دشت سے خاک اٹھا لایا تھا اجداد کی میں

گھر میں رکھے تو ہوئے چاند کے ہالے شب و روز

دست خونیں نہ کبھی وقت اٹھائے تجھ پر

حکم لمحوں پہ چلا ڈھال بنا لے شب و روز

اپنے دن رات سے ممکن ہے کہاں کوئی فرار

دشت وحشت میں اتر اور سجا لے شب و روز

ذوالفقار نقوی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(2824) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Zulfiqar Naqvi, Be Murawat Hain To Wapas Hi Utha Le Shab O Roz in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 27 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Zulfiqar Naqvi.