بھارتی صحافتی تنظیم نے بھی کنگنا رناوٹ کا بائیکاٹ کرنے کا فیصلہ کرلیا

بدھ جولائی 22:14

بھارتی صحافتی تنظیم نے بھی کنگنا رناوٹ کا بائیکاٹ کرنے کا فیصلہ کرلیا
ممبئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 10 جولائی2019ء) بھارتی صحافتی تنظیم نے بھی کنگنا رناوٹ کا بائیکاٹ کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔بھارتی صحافتی تنظیم نے اعلان کیا کہ اور اداکارہ کو کسی بھی قسم کی میڈیا کوریج دینے سے انکار کردیا۔ایسا اعلان انہوں نے کنگنا رناوٹ کی جانب سے ایک ایونٹ کے دوران نامور صحافی سے بدتمیزی کرنے کے بعد کیا۔ کنگنا رناوٹ اپنی جلد ریلیز ہونے والی فلم 'ججمنٹل ہے کیا' کے میوزک لانچ کی تقریب میں فلم کی باقی ٹیم کے ساتھ اس ایونٹ میں شریک ہوئیں۔

اس دوران جسٹن را نامی صحافی نے کنگنا رناوٹ سے فلم کے حوالے سے سوال پوچھنا چاہا، تاہم کنگنا نے انہیں تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ وہ ان کے سوالات کا جواب نہیں دیں گی، کیوں کہ وہ اس سے قبل ان کی فلم 'منی کارنیکا' کے خلاف بھی غلط باتیں تحریر کرتے آرہے ہیں۔

(جاری ہے)

کنگنا رناوٹ نے جسٹن کی سوچ کو منفی کہتے ہوئے کہا کہ وہ ان کے دشمن بن چکے ہیں اور ان کے بارے میں گھٹیا باتیں لکھ رہے ہیں۔

تاہم اس دوران جسٹن کنگنا کی جانب سے لگائے الزامات کو بیبنیاد ٹھہراتے رہے جبکہ انہوں نے کنگنا سے ان الزامات کے ثبوت بھی مانگے۔رپورٹر نے کنگنا رناوٹ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ 'یہ انداز صحیح نہیں، اگر آپ ایک طاقتور مقام پر بیٹھی ہیں اس کا یہ مطلب بالکل نہیں کہ وہ رپورٹرز کو ڈرائیں'۔اس موقع پر فلم کی پروڈیوسر ایکتا کپور نے صحافیوں سے وعدہ کیا کہ وہ بعدازاں اس معاملے کو خود حل کریں گی۔

اس واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر سامنے آنے کے بعد کنگنا رناوٹ کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا گیا۔جبکہ صحافتی تنظیم نے فلم کی پروڈیوسر ایکتا کپور سے مطالبہ کیا کہ کنگنا رناوٹ کو رپورٹر سے معافی مانگنی ہوگی اور ایسا نہ ہونے پر وہ کنگنا رناوٹ کو اس فلم کی تشہیر کے دوران کوئی میڈیا کوریج نہیں دیں گے، جبکہ مستقبل میں بھی ان کا بائیکاٹ کریں گے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 10/07/2019 - 22:14:27

متعلقہ عنوان :

Your Thoughts and Comments