میرے شوہر فحش نہیں قابل اعتراض فلمیں بناتے ہیں، شلپا شیٹی

شوہر کی ’ہاٹ شاٹ‘ نامی ایپلی کیشن پر جو مواد دستیاب ہے، اسے فحش نہیں کہا جا سکتا، اداکارہ

ہفتہ 24 جولائی 2021 15:02

میرے شوہر فحش نہیں قابل اعتراض فلمیں بناتے ہیں، شلپا شیٹی
ممبئی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 24 جولائی2021ء) بولی وڈ اداکارہ شلپا شیٹی نے اپنے شوہر کا ساتھ دیتے ہوئے ان پر فحش فلمیں بنانے کے عائد کیے گئے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ راج کندرا قابل اعتراض فلمیں بناتے ہیں۔شلپا شیٹی کے شوہر راج کندرا کو ممبئی پولیس نے 19 جولائی کو گرفتار کرکے جیل منتقل کردیا تھا اور بعد ازاں 22 جولائی کو انہیں عدالت پیش کیا گیا تھا۔

عدالت نے راج کندرا کو 27 جولائی تک جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا جبکہ پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے ان کی رہائش گاہ سے کمپیوٹر اور ہارڈ ڈسک برآمد کرلی۔بعد ازاں راج کندرا کی اہلیہ اداکارہ شلپا شیٹی نے 23 جولائی کو ممبئی پولیس کو اپنا بیان ریکارڈ کرواتے ہوئے شوہر پر لگے الزامات کو مسترد کردیا۔

(جاری ہے)

شلپا شیٹی نے اپنا بیان ریکارڈ کرواتے ہوئے شوہر پر لگے الزمات کو یکسر مسترد کرتے ہوئے کہا کہ ان کے جیون ساتھی فحش فلمیں بنانے میں ملوث نہیں ہیں۔

پولیس کو ریکارڈ کروائے گئے بیان میں اداکارہ نے کہا کہ ان کے شوہر کی ’ہاٹ شاٹ‘ نامی ایپلی کیشن پر جو مواد دستیاب ہے، اسے فحش (پورن) نہیں کہا جا سکتا۔شلپا شیٹی نے پولیس کو فحش مواد اور قابل اعتراض مواد میں فرق بھی بتایا اور کہا کہ ان کے شوہر شہوت انگیز فلمیں بناتے ہیں جنہیں پورن نہیں کہا جا سکتا۔اداکارہ کو پولیس نے اس وقت شامل تفتیش کیا، جب پولیس کو معلوم ہوا کہ اداکارہ نے حال ہی میں شوہر کی کمپنی ’ویان انڈسٹریز‘ کے ڈائریکٹر کے عہدے سے استعفیٰ دیا تھا۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ اداکارہ نے اس وقت عہدے سے استعفیٰ دیا تھا جب کہ ان کے شوہر کی کمپنی نے فحش یا قابل اعتراض فلمیں بنانے پر کام شروع کیا تھا۔پولیس اس بات کی بھی تفتیش کر رہی ہے کہ کہیں شلپا شیٹی نے تو پورن فلمیں بنانے سے کوئی فائدہ حاصل تو نہیں کیا ۔پولیس شلپا شیٹی کے بینک اکائونٹس کی بھی تفتیش کر رہی ہے کہ کہیں انہوں نے فحش فلموں سے ہونے والی کمائی میں سے مالی فائدہ تو نہیں اٹھایا ۔

متعلقہ ستارے‎ :

Shilpa Shetty

شلپا شیٹھی

Shilpa Shetty

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 24/07/2021 - 15:02:25

Your Thoughts and Comments