پشاور ،قومی ٹائٹل جیتنے کے باوجود کسی نے حوصلہ افزائی نہیں کی، نعمان قریشی

پشاور ،قومی ٹائٹل جیتنے کے باوجود کسی نے حوصلہ افزائی نہیں کی، نعمان قریشی

جمعرات اپریل 7:19 pm
پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 20 اپریل2017ء) پاکستان میں باڈی بلڈنگ کی تاریخ میں پہلی بار متعارف کرایا گیا مین فزیک ٹائٹل مسٹر پاکستان جیتنے والے پشاور کے محمد نعمان قریشی نے کہا ہے کہ اتنا بڑا ٹائٹل جیتنے کے باوجود خیبر پختونخوا سپورٹس بورڈ، باڈی بلڈنگ سے تعلق رکھنے والے افراد یا کسی ادارے نے ان کی حوصلہ افزائی کے لئے رابطہ نہیں کیا، چھ سالوں سے اپنے اخراجات سے تن سازی کی ضروریات پوری کر رہے ہیں حکومت اور نہ ہی کسی سرکاری ادارے نے تعاون کیا۔

سپورٹس رائٹرز ایسوسی ایشن کے میٹ دی پریس پروگرام میں اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ باڈی بلڈنگ فیڈریشن (یحییٰ بٹ گروپ) کے زیر اہتمام ہونے والے جونیئر مسٹر پاکستان اور مین فزیک مسٹر پاکستان مقابلوں میں چاروں صوبوں کے کھلاڑیوں نے حصہ لیاپہلا ٹائٹل انہوں نے جیت لیا جو صوبے کے لئے بڑا اعزاز ہے، اب وہ 22 اور 23 اپریل کو کراچی میں ہونے والے مسل مینیا ایونٹ میں حصہ لیں گے جس میں دبئی میں ہونے والے عالمی مقابلے کے لئے کھلاڑیوں کا انتخاب کیا جائے گا۔

(خبر جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ مین فزیک مقابلے تن سازی میں غیر ممنوعہ ادویات کے استعمال کے خاتمے کی جانب اہم پیشرفت ثابت ہوں گے کیونکہ شعوری یا شعوری طور کھلاڑی ادویات کا استعمال کر رہے ہیں جس کے صحت پر مضر اثرات پڑ رہے

خبر کی مزید تفصیل پڑھئیے

ہیں پچھلے ڈیڑھ سال کے دوران غیر ممنوعہ ادویات کے استعمال کی وجہ سے ملک بھر میں 12 کھلاڑی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں، مین فزیک میں قدرتی خوراک کے ذریعے کھلاڑیوں کو تیار کیا جاتا ہے جس سے صحت پر کوئی مضر اثرات نہیں پڑتے۔

انہوں نے کہا کہ وہ قدرتی خوراک کے ذریعے کھلاڑیوں کی تیاری کے لئے کلب بنائیں گے جس میں ادویات کے مضر اثرات کے خلاف شعور بھی اجاگر کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ وہ عالمی سطح پر پاکستان کی نمائندگی کرنا چاہتے ہیں جس کے لئے محنت کر رہے ہیں امید ہے کہ وہ اپنے مقصد میں کامیاب ہوجائیں گے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ باڈی بلڈنگ میں ادویات کے استعمال پر مکمل پابندی عائد کی جائے قدرتی خوراک کے ذریعے تن سازی کے رجحان کو فروغ دیا جائے جو کھیل اور کھلاڑی دونوں کے لئے فائدہ مند ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ کھیل کے ساتھ ساتھ وہ تعلیم بھی جاری رکھے ہوئے ہے ایڈورڈز کالج پشاور سے ہایئر ڈپلومہ ان بزنس کی تعلیم حاصل کر رہے ہیں کھلاڑی جتنے تعلیم یافتہ ہوں گے اتنے ہی وہ کھیل میں آگے جائیں گے۔

مزید خبریں