کراچی میں ہونے والے پی ایس ایل کے فائنل سمیت 5 میچوں کے لئے تمام تر اقدامات کو جلد سے جلد مکمل کیا جارہا ہے، سعیدغنی

17فروری سے 17مارچ تک شہر میں روڈ کٹنگ پر پابندی عائد جبکہ اشتہاری کمپنیوں کو دیئے جانے والے اجازت نامے بھی منسوخ کردیئے گے

پیر فروری 15:50

کراچی میں ہونے والے پی ایس ایل کے فائنل سمیت 5 میچوں کے لئے تمام تر اقدامات ..
کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 فروری2019ء) وزیربلدیات سندھ سعیدغنی نے کہا ہے کہ اس سال کراچی میں ہونے والے پی ایس ایل کے فائنل سمیت 5 میچوں کے لئے تمام تر اقدامات کو جلد سے جلد مکمل کیا جارہا ہے۔ صرف نیشنل اسٹیڈیم اور اطراف کے علاقوں کو خوبصورت بنانے کی بجائے اس بار پورے شہر کو خوبصورت بنایا جارہا ہے اور اس کے لئے وزیر اعلیٰ سندھ کی ہدایت پر بننے والی کمیٹی نے تمام انتظامات کو حتمی شکل دینا شروع کردیا ہے۔

17 فروری سے 17 مارچ کے دوران شہر میں تمام ڈسٹرکٹ میں روڈ کٹینگ پر پابندی عائد کی جارہی ہے جبکہ اس دوران تمام اشہاری کمپنیوں کو کے ایم سی اور ڈی ایم سیز کی جانب سے دئیے جانے والے اجازت نامے بھی منسوخ کردئیے جائیں گے۔ شہر کے تمام چوراہوں اور عوامی مقامات پر عوام کی سہولیات کے لئے میچ کو براہ راست دکھانے کے لئے بڑی اسکرین نصب کی جائیں گی۔

(جاری ہے)

ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیر کے روز کمشنر ہائوس میں منعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں مئیر کراچی وسیم اختر، سیکرٹری بلدیات خالد حیدر شاہ، کمشنر کراچی افتخار شالوانی، تمام ڈی ایم سیز کے ڈپٹی کمشنرز، ڈی ایم سی ایسٹ کے چیئرمین معید انور سمیت دیگر اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔ اجلاس میں پی ایس ایل 2019 کے حوالے سے کراچی میں فائنل اوردیگر میچز میں سیکورٹی، صفائی ستھرائی، شہر کو خوبصورت بنانے، پارکنگ سمیت دیگر امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔

اس موقع پر کمشنر کراچی نے اجلاس کو بتایا کہ انہوںنے گذشتہ روز نیشنل اسٹیڈیم کا دورہ کیا ہے اور اسٹیڈیم کے اندر اور باہر جاری تمام کاموں کا جائزہ لیا ہے اور اس سلسلے میں انہوںنے PCB کے نمائندوں سے بھی تمام امور پر بات چیت کی ہے۔ مئیر کراچی وسیم اختر نے اجلاس کو بتایا کہ کراچی کو اس ٹورنامنٹ کے حوالے سے خوبصورت بنانے کی غرض سے ماضی میں کئے جانے والے اقدامات کو بھی مدنظر رکھا جارہا ہے اور کوشش کی جارہی ہے کہ شہر میں 17 فروری سے قبل سندھ سولڈ ویسٹ مینجمنٹ بورڈ اور تمام ڈی ایم سیز کے ساتھ مل کر صفائی کے کاموں کو مکمل کرلیا جائے۔

اس موقع پر وزیر بلدیات سندھ اور PSL 2019 کے لئے وزیر اعلیٰ سندھ کی ہدایات پر بنائی جانے والی کمیٹی کے سربراہ سعید غنی نے کہا کہ اس بار کراچی میں PSL کے حوالے سے شہر بھر کو خوبصورت بنانے کے ساتھ ساتھ میلے کا سماں دینے کے لئے بھی اقدامات کئے جائیں۔ انہوںنے مئیر کراچی اور تمام ڈی سیز اور ڈی ایم سی ایسٹ کے چیئرمین معید انور کو ہدایات دی کہ 17 فروری سے 17 مارچ کے دوران شہر میں روڈ کٹینگ پر مکمل پابندی عائد کردی جائے اور اس کے بعد بھی شہر میں بے جا سڑکوں کی کٹنگ کے سلسلے کو بند کیا جائے۔

انہوںنے کہا کہ سندھ حکومت، کے ایم سی اور ڈی ایم سیز شہر کی سڑکوں اور گلیوں کی مرمت اور ان کو بنانے پر کروڑوں روپے خرچ کرتی ہے لیکن افسوس کہ مختلف ادارے اور متعدد مقام پر عوام ازخود ان سڑکوں کو اپنے مقاصد کے لئے کاٹ دیتے ہیں جس سے مشکلات میں اضافہ ہوجاتا ہے۔ اس موقع پر شہر بھر میں پولز پر لگے تمام ہورڈنگز ، بینرز اور پلے کارڈز کو بھی ہٹانے کے انہوںنے احکامات جاری کئے۔

اجلاس میں پی ایس ایل کے میچز کے دوران پارکنگ، عوام اور کھلاڑیوں کی سیکورٹی، ٹریفک پلان، ایمرجنسی میڈیکل یونٹس سمیت دیگر امور کا بھی جائزہ لیا گیا اور اس سلسلے میں تمام ڈی سیز کو اپنی رپورٹ 1 روز میں مرتب کرکے کمشنر کراچی کو جمع کرانے کی ہدایات دی گئی۔ اجلاس میں طے پایا کہ کمیٹی کے تمام ممبران آئندہ ایک سے دو روز میں میچز کے روٹس، گرائونڈ اور پارکنگ سمیت دیگر مقامات کا جائزہ لیں گے اور اسٹیڈیم کے اندر اور باہر کے تمام امور کا جائزہ لیں گے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 11/02/2019 - 15:50:01

Your Thoughts and Comments