آئی پی ایل کے دوران کوئی انٹرنیشنل میچ نہیں ہونا چاہئے: کیون پیٹرسن

کرکٹ بورڈز کو احساس ہونا چاہئے کہ آئی پی ایل دنیا کا سب سے بڑا سالانہ ٹورنامنٹ ہے ،کھلاڑی بین الاقوامی کرکٹ کھیلنے کی بجائے اس میں حصہ لینے کو ترجیح دیتے ہیں: سابق برطانوی کپتان

Zeeshan Mehtab ذیشان مہتاب جمعرات اپریل 17:29

آئی پی ایل کے دوران کوئی انٹرنیشنل میچ نہیں ہونا چاہئے: کیون پیٹرسن
لندن (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار ۔ 8 اپریل 2021ء ) انگلینڈ کے سابق مڈل آرڈر بیٹسمین کیون پیٹرسن کا خیال ہے کہ انڈین پریمیر لیگ (آئی پی ایل) سیزن کے دوران کوئی بین الاقوامی میچ نہیں ہونا چاہئے۔ پیٹرسن نے کہا کہ کرکٹ بورڈز کو یہ احساس ہونا چاہئے کہ آئی پی ایل دنیا کا سب سے بڑا سالانہ ٹورنامنٹ ہے اور کھلاڑی بین الاقوامی کرکٹ کھیلنے کی بجائے اس میں حصہ لینے کو ترجیح دیتے ہیں ۔

پچھلے کچھ عرصے سے دنیائے کرکٹ کے کھلاڑیوں کی ترجیح ایک گرما گرم موضوع رہا ہے ، بہت سارے سابق کرکٹرز نے موجودہ کھلاڑیوں کی جانب سے اپنی اپنی ٹیموں کے ساتھ وفاداری پر سوال اٹھاتے ہوئے متنبہ کیا کہ آئی پی ایل میں ڈالرز کی ریل پیل بین الاقوامی کرکٹ کے خاتمے کا باعث بن سکتی ہیں ۔ دوسری طرف کیون پیٹرسن کا خیال ہے کہ آئی پی ایل کی ونڈو کے دوران کوئی بین الاقوامی میچ نہیں ہونا چاہئے اور کھلاڑیوں کو مقابلہ میں پوری طرح لگن لینے کی اجازت ہونی چاہئے۔

(جاری ہے)

پیٹرسن نے ٹویٹ کیا کہ ’’کرکٹ بورڈز کو یہ سمجھنے کی ضرورت ہے کہ آئی پی ایل اب کرکٹ کا سب سے بڑا شو ہے اور اس دوران کوئی اور بین الاقوامی میچ نہیں ہونا چاہیئے، یہ بہت آسان ہے‘‘۔
یاد رہے کہ آئی پی ایل کا تازہ ترین سیزن 9 اپریل تا 30 مئی کے درمیان کھیلا جانا ہے اور اس دوران پاکستان کو جنوبی افریقہ اور زمبابوے کے خلاف کھیلنا ہے جبکہ بنگلہ دیش اور سری لنکا کا آمنا سامنا ہوگا۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 08/04/2021 - 17:29:57

Your Thoughts and Comments