نیشنل ٹی ٹونٹی کپ کے دوران کامران اکمل اور عبدالرزاق کے درمیان جھڑپوں کا انکشاف

سینٹرل پنجاب کے کوچ نے وکٹ کیپر بلے باز کو قائد اعظم ٹرافی کی ٹیم سے باہر کردیا :ذرائع

Zeeshan Mehtab ذیشان مہتاب ہفتہ 16 اکتوبر 2021 13:36

نیشنل ٹی ٹونٹی کپ کے دوران کامران اکمل اور عبدالرزاق کے درمیان جھڑپوں کا انکشاف
لاہور (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار ۔ 16 اکتوبر 2021ء ) نیشنل ٹی ٹونٹی کپ میں کامران اکمل اور عبدالرزاق ایک دوسرے سے الجھ پڑے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ نیشنل ٹی ٹونٹی میں کامران اکمل اور عبدالرزاق کے درمیان جھڑپ ہوگئی، عبدالرزاق کے اس رویے کی وجہ سینئر کھلاڑی ٹیم چھوڑکر جارہے تھے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ عبدالرزاق اور سینئر کھلاڑیوں کے درمیان دو بار تلخ کلامی ہوئی، ٹیم کے دیگر کھلاڑیوں نے کامران اکمل کو ساڑھے 4 گھنٹوں تک منایا۔

ذرائع کا بتانا ہے کہ عبدالرزاق نے کامران اکمل کو قائد اعظم ٹرافی کی ٹیم سے بھی باہر کردیا۔ واضح رہے کہ اس سے قبل قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کھلاڑی عبدالرزاق کا کہنا تھا کہ ورلڈ کپ 2011ء کے میچ میں کامران اکمل نے جان بوجھ کر کیچ چھوڑے تھے، کامران کمل نے عبدالرزاق کے الزامات کو مسترد کردیا تھا۔

(جاری ہے)

رزاق کا کہنا تھا کہ 2011ء کے ورلڈ کپ میں نیوزی لینڈ کے خلاف میچ میں شعیب اختر کی گیند پر کامران اکمل نے کیوی بلے باز روس ٹیلر کے دو کیچ جان بوجھ کر چھوڑے تھے۔

عبدالرزاق کا کہنا تھا کہ سری لنکا کے میدان پالی کیلے میں آخری اوور کرنے کے لیے کوئی تیار نہ تھا ،شاہد آفریدی فاسٹ بولر شعیب اختر سے بولنگ کرانے کے حق میں نہیں تھے ،عمر گل کے 10 اوورز پورے ہوچکے تھے جس کے باعث مجبوراً مجھے 49 واں اوور کروایا گیا حالانکہ میں تو کافی عرصے سے آخری اوور نہیں کرارہا تھا جس کے باعث میرے آخری اوور میں 19 رنز بن گئے تھے۔ وکٹ کیپر بلے باز کامران اکمل کا کہنا تھا کہ کہ عبدالرزاق بھائی کو ایسی بات نہیں کرنی چاہئے تھیں، یہاں جس کا دل چاہتا ہے منہ اٹھا کر کہہ دیتا ہے، انہیں ثبوت فراہم کرنا ہوں گے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 16/10/2021 - 13:36:34

Your Thoughts and Comments