بند کریں
جمعرات جون

مزید مضامین

حالیہ تبصرے

اویس رضا 30-03-2018 12:41:06

مجھے شامی کے موبائل اچھے لگتے ہیں اور اردو پوائنٹ کی خبریں آسان اور اردو میں ہوتی ہیں، آسان ویپ سائیڈ ہے ٹیکنالوجی ٹپش تیمور میری ویب سائیڈ ہے

  مضمون دیکھئیے
dr anwar kama ch 06-03-2018 15:26:22

very fruit full

  مضمون دیکھئیے
Ar. Tauseef Amjad Meer. 25-01-2018 11:30:55

Its IT Technology day by day improvements, thank you for acknlowdge publicly awareness

  مضمون دیکھئیے
Shafiq rehman 31-08-2017 11:15:33

Agr yh Sach Hai to Boht hii A6i Khabr Hai Agr fake hai to Fitty Muh

  مضمون دیکھئیے
muhammad ather 11-08-2017 14:28:02

mjhe technology sikhne ka bht shok he sir

  مضمون دیکھئیے
Syed Mudasar Hassan Shah 12-06-2017 11:15:24

good news

  مضمون دیکھئیے
گوگل ارتھ پر اب صارفین سٹوریز اور تصاویر شیئر کر سکیں گے
گوگل ارتھ پر سٹوریز کو پرائیویٹ یا پبلک شیئر کیا جا سکے گا۔

گوگل ارتھ سب کا ہی پسندیدہ پروگرام ہوں۔ سکول کے بچوں سے لیکر بڑے بوڑھے بھی مختلف مقامات کو دیکھنے کے لیے اسے استعمال کرتے ہیں۔اسی وجہ سے گوگل نے اس پروگرام کو کچھ سوشل کرنے کا منصوبہ بنایا ہے۔اب گوگل ارتھ کے صارفین دھندلی سیٹلائٹ تصاویر کو اپنے ٹیکسٹ، فوٹوگرافس اور ویڈیوز سے بہتر بنا سکیں گے۔
گوگل ارتھ کی ڈائریکٹر ربیکا مور نے برازیل میں ہونے والی ایک تقریب کے دوران رائٹر کوبتایا کہ لوگ گوگل ارتھ پر اپنی خاندانی تاریخ، ٹرپ کی معلومات وغیرہ غرض کہ سب کچھ شیئر کر سکیں گے۔


گوگل کا ارادہ ہے کہ وہ گوگل ارتھ میں اگلے چند سالوں تمام سوشل فیچر متعارف کرائے گا تب تک گوگل اس کے چھوٹے پیمانے پر تجربات کرتا رہے گا۔ اس کے لیے گوگل نے بہت سے لوگوں کی ٹیم بنائی ہے، جو گوگل ارتھ پر سٹوریز شیئر کریں گی۔
ربیکا کے مطابق گوگل اپنی اس سروس سے کوئی مالی فوائد حاصل کرنے کا ارادہ نہیں رکھتا۔ گوگل ارتھ لوگوں کے لیے اپنی کہانیاں، تجربات اور تجاویز شیئر کرنے کےلیے ان چھوئی جگہ ہے۔انہوں نے کہا کہ گوگل ارتھ دنیا والوں کے لیے ہمارا تحفہ ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ بجٹ کے معاملے میں گوگل اشتہارات سے اچھا پیسا کماتا ہے اور گوگل کے لیے سب کچھ پیسا ہی نہیں ہے۔
گوگل ارتھ پر سٹوریز کو پرائیویٹ یا پبلک شیئر کیا جا سکے گا۔

یہ خبر اُردو پوائنٹ پر شائع کی گئی۔ خبر کی مزید تفصیل پڑھنے کیلئے کلک کیجئے
تاریخ اشاعت: 2017-07-13

: متعلقہ عنوان

مینوفیکچرر کا نام     :     گوگل

گوگل کے مزید عنوان پڑھنے کے لئے یہاں کلک کریں