ٹیکنالوجی کے ذریعے ٹیکس چوری روکنے کیلئے ایف بی آر نے 5 سال بعد معائدے پر دستخط کر دیئے

ٹیکنالوجی کے ذریعے ٹیکس چوری روکنے کیلئے ایف بی آر نے 5 سال بعد معائدے ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 05 مارچ2021ء)ٹیکنالوجی کے ذریعے ٹیکس چوری روکنے کیلئے ایف بی آر نے 5 سال بعد معائدے پر دستخط کر دیئے ۔تمباکو، سیمنٹ، چینی اور کھاد کے لئے ٹریک اینڈ ٹریس نظام کا آغاز یکم جولائی 2021 کو کر دیا جائے گا ۔ٹریک اینڈ ٹریس نظام کے لئے ایف بی آر اور اے جے سی ایل کے درمیان کنٹریکٹ پر دستخط ہوگئے۔

ایف بی آر اور اے جے سی ایل بمہ اس کے پارٹنرز آتھینٹیکس اور میٹاس کارپوریشن جنوبی افریقہ کے درمیان معاہدہ ہوگیا۔معائدہ تمباکو، سیمنٹ، چینی اور کھاد کے لئے ٹریکس اینڈ ٹریس نظام کو چلانے کے لئے کنٹریکٹ پر دستخط ہوئے ۔ایف بی آر ممبر آئی آر آپریشنز ڈاکٹر محمد اشفاق احمد اور چیف ایگزیکٹیو آتھینٹیکس نے معائدے پر دستخط کئے ۔

(جاری ہے)

اس نظام کی بدولت ٹیکس ریوینیو میں اضافہ ہو گا ۔

الیکٹرانک طریقہ کار سے نگرانی اور پیداواری سطح پر 5 ارب ٹیکس سٹیمپس لگانے کے باعث پورے ملک میں جعلی اور ممنوعہ اشیا کی سمگلنگ کو کنٹرول کیا جا ئے گا ۔ ایف بی آر اے جے سی ایل کے ساتھ مل کر مقررہ وقت کے اندر اس نظام کو پایہ تکمیل تک پہنچائے گا ۔ٹریک اینڈ ٹریس نظام ساڑھے 4 کروڑ ٹن سیمنٹ، 4 ارب سے زائد سگریٹ سٹکس، 40 لاکھ ٹن سے زائد چینی اور 3 لاکھ ٹن کھاد کو ٹیکس نیٹ میں لانے کا باعث بنے گا،نئے طریقہ کار سے جعلی اشیا کا خاتمہ اور ریونیو میں اضافہ ہو گا ۔

Your Thoughts and Comments