بجٹ میں نشے کے عادی افرادکیلئے فیصل آباد میں علاج سنٹرو ملتان میں بحالی سنٹر کی تجدیدترجیحات میں شامل

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 14 جون2021ء) پنجاب کے آئندہ مالی سال 2021-22 کے بجٹ میں جھنگ ، ملتان اور ساہیوال میں پناگاہوں کی تعمیر ، نشے کے عادی افراد کی بحالی کیلئے فیصل آباد میں علاج اور بحالی سنٹر کا قیام اور ملتان میں بحالی سنٹر کی تجدید ہماری ترجیحات میں شامل ہیں،علاوہ ازیں ڈی جی خان میں معذور افراد کیلئے نشیمن گھر اور ٹوبہ ٹیک سنگھ اور اٹک میں بچوں کیلئے ماڈل چلڈرن ہوم کا قیام بھی کیا جا رہا ہے۔

(جاری ہے)

وزیرخزانہ مخدوم ہاشم جواں بخت نے بجٹ تقریر میں بتایا کہ ہماری حکومت نے اقتدار سنبھالتے ہی معاشرے کے کمزور ترین طبقات کی بہبود کیلئے پناہ گاہوں اور مسافر خانوں کے قیام کے اقدامات شروع کر دیے تھے۔ان اقدامات کی ملک گیر پذیرائی کی بدولت ہم نے فیصلہ کیا کہ کمزور لوگوں کی کفالت کے اِن اداروں کو صوبے کے طول و عرض میں قائم کیا جائے۔ اس مقصد کیلئے پنجاب پناہ گاہ اتھارٹی قائم کر دی گئی ہے۔ اب تک مستقل اور عارضی پناہ گاہوں کی تعداد94 ہے جو معاشرے کے کمزور ترین افراد کے سماجی تحفظ کو حکومتی اور نجی شراکت داری سے معیاری اور باعزت خدمات مہیا کر رہی ہیں۔

Your Thoughts and Comments