حیسکو کی نا اہلی اور مجرمانہ غفلت کے باعث ٹرانسفارمرز پھٹنے اور ہائی ٹینشن تار گرنے کے سبب جان لیوا حادثات معمول بنتے جا رہے ہیں،تحریک لبیک

حیدرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 23 جولائی2021ء)تحریک لبیک یا رسول اللہ صوبہ سندھ کے ایک وفد نے صوبائی رہنماء برئے قانونی امور سلیمان سروری ایڈوکیٹ کی سربراہی میں شاہ لطیف آباد یونٹ نمبر 8 میں گذشتی روز پیش آنیوالے سانحے میں شہید افراد کی نماز جنازہ میں شرکت کی اور شہداء کے لواحقین سے اظہار تعزیت کیا وفد میں تحریک لبیک کے ضلعی ناظم اعلی حیدرآباد عبدالقادر ملکانی ضلعی رابطہ سیکریٹری عمران قریشی اور ممبر اسلم سروری ایڈوکیٹ ودیگر بھی شامل تھے، سلیمان سروری ایڈوکیٹ نے ٹرانسفارمر سانحے کی شدید مذمت کی اور کہا کہ حیسکو کی نا اہلی اور مجرمانہ غفلت کے باعث ٹرانسفارمرز پھٹنے اور ہائی ٹینشن تار گرنے کے سبب جان لیوا حادثات معمول بنتے جا رہے ہیں جس میں عوام کو بھاری جانی و مالی نقصان کا خمیازہ بھگتنا پڑ رہا ہے بار بار توجہ دلانے کے باوجود غیر معیاری ٹرانسفارمرز اور بجلی کے ہائی ٹینشن تاروں کا سد باب نہیں کیا جا رہا جس کے باعث یہ مسلسل عوام کے کیا خطرے کی گھنٹی بنتے جا رہے ہیں یہی وجہ ہے کہ صرف دو ماہ میں یکے بعد دیگرے ٹرانسفارمرز اور ہائی ٹینشن وائر گرنے کے واقعات سے ہلاکتوں اور جھلسنے جیسے جانی نقصانات سامنے آ? انہواں نے حکومت اور نیپرا سے مطالبہ کیا کہ حیسکو کی اس غیر ذمہ داری اور مجرمانہ غفلت کا نوٹس لیا جا? اور واقع میں ہلاک ہونیوالوں کے لیئے 15 لاکھ فی کس اور زخمی افراد کے لیئے کم از کم 5 لاکھ فی کس امداد اور بہترین ہسپتالوں میں علاج مفت کروانے کا اعلان کیا جائے، اس موقع پر عبدالقادر ملکانی نے کہا کہ حیدرآباد میں ٹرانسفارمر پھٹنے اور بجلی کے تاروں میں شارٹ سرکٹ جیسے واقعات معمول بن چکے ہیں لیکن کوئی اس کی ذمہ داری لینے کو تیار نہیں۔

Your Thoughts and Comments