کوہاٹ ،درہ آدم خیل میں ڈینگی تیزی سے پھیلنے لگا ،درجنوں افراد متاثر

کوہاٹ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 21 ستمبر2021ء) کوہاٹ کے قبائلی سب ڈویژن درہ آدم خیل میں ڈینگی تیزی سے پھیلنے لگا جس کے باعث درجنوں افراد متاثرہوگئے جبکہ کم از کم ایک خاتون کے جاں بحق ہونے کی غیرمصدقہ اطلاع ہے۔مقامی میڈیا اور باخبر ذرائع کے مطابق درہ آدم خیل میں ڈینگی مچھر کے وار جاری ہیں جہاں گزشتہ دو ہفتوں کے دوران اب تک درجنوں افراد ڈینگی وائرس سے متاثر ہوکربخارمیں مبتلا ہوچکے ہیں تاہم سرکاری طورپر صرف چند کیس ہی رپورٹ ہوئے ہیں۔

موصولہ اطلاعات کے مطابق ڈینگی سے متاثرہ درجنوں افراد کو تشویشناک حالت میں پشاور منتقل کردیا گیا ہے جبکہ متعدد دیگر مقامی طورپر زیر علاج ہیں۔ان اطلاعات کے مطابق درہ آدم خیل کے علاقے مزیدخیل ‘ شریف خیل ‘ سنی خیل اور زرغون خیل سب سے زیادہ متاثر ہوئے ہیں جہاں ڈینگی بخار میں درجنوں افرادمبتلا ہوگئے ہیں جبکہ غیرمصدقہ اطلاع اور مقامی سوشل میڈیا کے مطابق مزید خیل میں ایک خاتون ڈینگی بخار میں مبتلا ہوکرجاں بحق ہوچکی ہے۔

(جاری ہے)

اس ضمن میں محکمہ صحت درہ آدم خیل کے ڈپٹی ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر شعیب آفریدی نے رابطہ کرنے پر درہ آدم خیل میںڈینگی بخارسے متاثرہ مریضوں کی تصدیق کی تاہم ڈینگی بخار سے کسی بھی مریض کی موت واقع ہونے کی سختی سے تردید کرتے ہوئے بتایا کہ ڈویژنل ہیڈکوارٹر ہسپتال کوہاٹ میں درہ آدم خیل سے تعلق رکھنے والا صرف ایک مریض ڈینگی سے متاثر ہے جس کی حالت تسلی بخش ہے۔

ڈاکٹر شعیب نے مزید بتایا کہ علاقے میں ڈینگی آگاہی مہم کے ذریعے لوگوں میں ڈینگی مچھر سے حفاظتی تدابیر کے بارے میں آگاہ کیا جارہا ہے جن پر عمل کرکے ڈینگی سے بچایاجاسکتا ہے۔ادھر بتایاگیا ہے کہ مقامی انتظامیہ نے بھی منگل کے روز درہ آدم خیل میں ڈینگی آگاہی مہم شروع کردی جبکہ علاقے میں جگہ جگہ مچھرمارسپرے بھی کرایا جارہا ہے۔

Your Thoughts and Comments