بچھڑی ہوئی جڑواں بہنیں شناختی کارڈ فراڈ کی تحقیقات کی وجہ سے 26 سال دوبارہ مل گئیں
UrduPoint Social

بچھڑی ہوئی جڑواں بہنیں شناختی کارڈ فراڈ کی تحقیقات کی وجہ سے 26 سال دوبارہ مل گئیں

منگل دسمبر 11:49 pm

26 سال سے زائد عرصہ سے ایک دوسرے سے بچھڑی  جڑواں  بہنیں پچھلے ماہ ایک شناختی فراڈ کی تحقیقات کے نتیجے میں ایک دوسرے سے  دوبارہ مل گئیں۔
نومبر کے مہینے میں  میں آبادی کے اعداد و شمار کی جانچ پڑتال کرتے ہوئے جیانگسو صوبے کے حکام کو محسوس ہوا کہ تائیژو شہر  سے تعلق رکھنے والی  ایک خاتون ،جس کا ابتدائی نام، یانگ اورووشی شہر سے تعلق رکھنے والی  خاتون پئی   میں  حیرت انگیز طور پر بہت زیادہ مشابہت ہے۔

یانگسی  ایوننگ پوسٹ کے مطابق ان کی پیدائش صرف ایک سال کے فرق سے درج تھی، جس سے متعلقہ حکام کو یقین ہوگیا کہ یانگ اور پئی درحقیقت ایک ہی شخصیت ہے اور انہوں نے  اس معاملے میں اپنی تحقیقات کا آغاز کر دیا۔
پہلے تفتیش کاروں نے یانگ کو بلایا۔اس نے وضاحت دی کہ ابتدائی عمر میں ہی اسے گود لیا گیا تھا اور اس نے سنا تھا کہ اس کی ایک جڑواں بہن بھی ہے لیکن اس کے بارے میں اسے کوئی معلومات نہیں ہیں یا اسے ڈھونڈ نکالنے کا کوئی ذریعہ نہیں ہے۔

(خبر جاری ہے)

پولیس نے یانگ کو پئی کا ایک فوٹو بھیجا۔ یانگ نے یہ تصویر اپنے شوہر کو  دکھائی  اور پوچھا کہ تصویر میں موجود شخصیت  خوبصورت ہے یا نہیں؟شوہر نےجواب دیا کہ یہ تم ہی ہو اس لیے 

خبر کی مزید تفصیل پڑھئیے

یہ خوبصورت  ہی ہے۔
یانگ نے پئی کی تصاویر اپنی فیملی کے ساتھ WeChat گروپ پر بھی شیئر کیں لیکن کسی کو بھی ذرا احساس نہ ہوا کہ یہ کسی اور شخصیت کی تصویر ہے۔
آخرکار پولیس کسی طرح پئی سے رابطہ کرنے میں بھی کامیاب ہوگئی۔

وہ اور اس کا شوہر بھی اسی طرح حیران رہ گئے۔ یانگ اور پئی یہ تصدیق کرنے کے لیے کہ وہ حقیقی بہنیں ہیں، ڈی این اے ٹیسٹ کروانے پر رضامند ہو گئیں۔ اس عرصے میں انہوں نے ایک دوسرے سے رابطے میں رہنے کے لیے معلومات کا تبادلہ کیا اور ساری رات WeChat پر پیغامات بھیجنے میں مگن رہیں۔
جس دن ڈی این اے ٹیسٹ کی رپورٹ سے تصدیق ہوئی تو 26 سال سے زائد عرصہ پہلے جدا ہونے والی بہنوں کا پہلی بار ملاپ بڑے رقت آمیز مناظر کی صورت میں سامنے آیا۔

یہاں تک کہ یانگ کی 16 ماہ کی بچی "Mom, hug" کہتے ہوئے پئی کے پاس پہنچ گئی۔
اس کے بعد پولیس کو پتہ چلا کہ ان دو خواتین کے اصل والدین کو ایک بیٹے کی خواہش تھی اور جب ان کی ماں نے بیٹے کے بجائے دو جڑواں بیٹیوں کو جنم دیا تو وہ مایوس ہو گئے۔ جلد ہی انہوں نے  دو مختلف خاندانوں کو دونوں بہنیں گود لینے کے لیے دے دیں، جہاں وہ ایک دوسرے کے وجود سے بے خبر رہتے ہوئے پرورش پاتی رہیں۔

Twin sisters reunited thanks to identity fraud investigation after being separated for 26 years

مزید خبریں