Multani Mitti Kay Faiday

ملتانی مٹی کے فائدے

Multani Mitti Kay Faiday
مدیحہ سیّد:
جب مدیحہ نے چہرے سے بیوٹی ماسک صاف کیا تو اسے کچھ عجیب سا لگا۔ چہرے کی جلد بالکل خشک ہوگئی تھی، حال آنکہ اس ماسک بناتے وقت اس میں ملتانی مٹی بھی شامل کی تھی۔ اصل میں اس کی جلد خشک تھی۔ جب اس نے ملتانی مٹی کاماسک چہرے پرلگایا تواس سے جلد مزید خشک ہوگئی۔
مدیحہ نے جوغلطی کی تھی، اس کاحل یہ تھاکہ اسے ماسک میں تھوڑا سا ناریل ملالینا چاہیے تھا۔

ایسے ماسک سے اسے دہرافائدہ ہوتا۔ اول یہ کہ اس کی جلد ملائم رہتی دوسرے داغ دھبے اور مہاسے بھی ختم ہوجاتے۔
ملتانی مٹی کے بہت سے فائدے ہیں۔ اس کو چہرے پرلگانے سے آپ کی جلد صاف رہتی ہے یہ مٹی جلد سے داغ دھبے اور مہاسے صاف کردیتی ہے ۔اسے لگانے سے آپ کاچہرہ صاف ستھرا، چمک دار ہوجاتاہے۔

(جاری ہے)


اگر آپ کی جلد چکنی ہے توملتانی مٹی کاماسک بناتے وقت اس میں گلاب کاعرق بھی ملالیں۔

اس کے علاوہ اس میں دودھ، بادام کاتیل یاشہدملانے سے بھی چہرے پر اچھے اثرات پڑتے ہیں۔ اس کے برعکس اگر آپ کی جلد خشک ہے تو ماسک بناتے وقت اس میں ناریل یازیتون کاتیل ملانا ضروری ہے۔ ہرقسم کی جلد کے لیے لیموں کارس بھی مفید ہے۔ یہ قدرتی طور پر جلد کوصاف کرتاہے اور دافع عفونت (اینٹی سیپٹک) ہے۔
ملتانی مٹی کوچہرے کی جلد صاف کرنے کے علاوہ سرکے بال صاف کرنے کے لئے بھی استعمال کیاجاسکتا ہے۔

مگر اسے شیمپو کی حیثیت سے استعمال کرنامناسب نہیں ہے۔ اگر آپ کے سرکے بالوں میں چکنا ہٹ زیادہ آجاتی ہے تو ملتانی مٹی کاگلاب کے عرق میں گھول لیجیے۔ پھر اس میں تھوڑا سالیموں کاعرق ملائیے۔ پندرہ منٹ تک اس لگدی میں چمچہ چلاتے رہیے۔ اپنی کسی دوست کی مدد سے اسے بالوں میں لگائیے اور مسلسل کنگھا کرتی رہیے۔ کنگھے کے دانے موٹے ہونے چاہیں۔

ملتانی مٹی لگانے کے بعد بالوں کوپندرہ منٹ تک خشک ہونے دیں۔ اس کے بعد اپنے بال نیم گرم پانی سے دھوڈالیں۔ کوشش کیجئے کہ مٹی آپ کی آنکھوں میں نہ جائے۔ بال دھوتے وقت مسلسل کنگھا کرتی رہیں، تاکہ بالوں سے ساری مٹی نکل جائے۔
اگر آپ کے بال خشک ہیں توملتانی مٹی لگانے سے پہلے بالوں میں دس پندرہ منٹ کے لیے ناریل یازیتون کاتیل لگالیں۔ ماسک بنانے کے علاوہ ملتانی مٹی کودافع عفونت کے طور پر زخموں پربھی لگایاجاسکتاہے۔ مٹی کوپانی میں گھول کرلگدی بنالیں اورزخم پرلگادیں۔ یہ عمل چند دنوں تک کریں۔ زخم مندمل ہوجائے گا، بہتر ہوگا کہ اس ضمن میں اپنے معالج سے بھی مشورہ کرلیجیے۔
تاریخ اشاعت: 2015-12-01

Your Thoughts and Comments

Special Articles article for women, read "Multani Mitti Kay Faiday" and dozens of other articles for women in Urdu to change the way they live life. Read interesting tips & Suggestions in UrduPoint women section.