Ramzan Ul Mubarak Aur Khawateen Ki Masrofiyat - Special Articles For Women

رمضان المبارک اور خواتین کی مصروفیات - خواتین کیلئے مضامین

منگل اپریل

Ramzan Ul Mubarak Aur Khawateen Ki Masrofiyat
راحیلہ مغل
جوں ہی رمضان المبارک کا آغاز ہوتا ہے ہر مسلم گھرانے میں روحانی خوشی کی لہر دوڑ جاتی ہے۔یوں محسوس ہوتا ہے کہ ایک الگ ہی تبدیلی چاروں طرف پھیل گئی ہے۔ماحول میں عجب ممانیت پھیل جاتی اور فضا میں انوکھی خوشبو رچ بس جاتی ہے۔خواتین،مرد اور بچے سب ہی اس مہینے کا بے صبری سے انتظار کرتے ہیں اور اس کا استقبال دل کی گہرائیوں سے کرتے ہیں۔

اس سال بھی ماہ رمضان کورونا وبا کے دوران آیا ہے یہی وجہ ہے کہ خواتین کی ذمہ داری پہلے سے کئی گنا بڑھ گئی ہے کہ وہ رمضان میں سحری، افطاری اور عبادات کے ساتھ گھر والوں کی صحت کا بھی خاص خیال رکھیں باہر کی چیزوں سے پرہیز کریں اور گھر پر ہی ہر چیز تیار کریں۔ ویسے بھی اس بابرکت مہینے کی محبت و عقیدت مسلمانوں کے لئے ہمیشہ سے ہی بے مثال رہی ہے۔

(جاری ہے)

اس ماہ میں ہر گھر میں خواتین کا کردار پہلے سے زیادہ اہم ہو جاتا ہے۔سحر و افطار کا خصوصی اہتمام کرنا،گھر والوں کو سحری کے وقت جگانا،بچوں کو نماز اور قرآن پاک کی تلاوت کا پابند بنانا،محلے میں افطاری بھیجنے کا اہتمام کرنا یہ ساری ذمے داریاں خواتین ہی ادا کرتی ہیں۔اگرچہ رمضان المبارک میں خواتین کی مصروفیات کچھ زیادہ ہی بڑھ جاتی ہیں،مگر یہ تمام تر ذمے داریاں وہ ہنسی خوشی نبھاتی ہیں۔

اکثر خواتین یہ ماہ مقدس شروع ہونے سے قبل ہی اپنی ساری تیاریاں مکمل کر لیتی ہیں۔
مثلاً گھر کی صفائی،پورے مہینے کا راشن ایک ہی دفعہ میں خرید لانا وغیرہ وغیرہ۔ہر ایک کی کوشش ہوتی ہے کہ اس ماہ میں زیادہ سے زیادہ وقت عبادت میں گزارے۔زیادہ تر خواتین سحر اور افطار کے لئے پکوان کی منصوبہ بندی پہلے سے ہی کر لیتی ہیں اور مصروفیات اس طرح ترتیب دیتی ہیں کہ عبادت کے لئے زیادہ سے زیادہ وقت نکل سکے۔

جو خواتین رمضان کی پہلے سے تیاری نہیں کرتیں انہیں مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے خاص طور پر افطار کے وقت کیوں کہ کسی کو شربت کی فکر ہوتی ہے،کسی کو گرم پکوڑوں کی اور کسی کو سموسوں کی طلب ہوتی ہے۔ایسی افراتفری میں کوئی بھی کام صحیح طرح سے نہیں ہو پاتا۔لہٰذا خاتون خانہ کو چاہیے کہ صبح کے اوقات میں ہی ضروری کام کر لیں۔مثلاً پکوڑوں کے لئے بیسن میں تمام مسالے اور اجزاء ملا کر فریج میں رکھ دیں تو شام میں انہیں پریشانی کا سامنا نہیں کرنا پڑے گا اور افطار کا اہتمام کرنے میں سہولت ہو گی۔

آپ پہلے سے بھی کچھ چیزیں تیار کر کے فریز کر سکتی ہیں۔اس کے علاوہ عبادت کے وقت بچوں کو بھی دینی سرگرمیوں میں شامل رکھیں۔انہیں بھی نماز کی پابندی کرنے کی عادت ڈالیں،اس بابرکت مہینے کو ان کی تربیت کا حصہ بنائیں اور انہیں رمضان کی عظمت کا احساس دلائیں۔
ان حالات میں جبکہ کورونا کی وبا عام ہے اور گرمی کی بھی آمد آمد ہے بھاری اور مرغن غذاؤں سے پرہیز کیا جائے اور ایسی خوراک کا اہتمام کیا جائے جو زود ہضم ہو اور پیاس سے دور رکھے۔

افطار کے وقت ایسی چیزوں کو دسترخوان کی زینت بنایا جائے جن میں نمک کا استعمال ہوتا کہ دن بھر میں نمک کی کمی جو بدن میں واقع ہوئی ہو،اس کا مداوا ہو سکے۔بچوں کے کھانے پینے میں خاصی احتیاط برتی جائے اور اس بات کا دھیان رکھا جائے کہ بچے بسیار خوری کا شکار نہ ہوں،اور نہ ہی کھٹی چیزیں کھائیں تاکہ گلے خراب نہ ہوں۔بچوں پر عبادات کے فوائد و ثمرات واضح کئے جائیں اور اس بات پر انہیں راغب کیا جائے کہ نماز کا اہتمام بالخصوص کریں۔

یہ فضیلت ہے اس مہینے کی کہ نصیحت اگر صحیح طور پر کی جائے تو وہ زود اثر ہوتی ہے۔
ماہ رمضان فضائل اور برکتوں کا مہینہ ہے۔یہ تحفہ ہے رب کریم کی جانب سے جو موقع فراہم کرتا ہے اپنے بندوں کو کہ وہ اپنا دامن نیکیوں سے بھریں اور آنے والی زندگی کے لئے زیادہ سے زیادہ زاد راہ اکٹھا کریں۔اس مہینے میں جس وصف پر زور سب سے زیادہ ہے وہ ہے صبر۔

انسانی فطرت میں صبر امن و سکون کی ٹھنڈک اور امید کی روشنی بھر دیتا ہے۔روزہ انسان کے اندر علم پیدا کرتا ہے اور عجلت کے مرض سے اسے محفوظ رکھتا ہے۔
خواتین اس مبارک مہینے میں اپنا خیال ضرور رکھیں۔ان کے اوقات کار اس مہینے میں چونکہ بڑھ جاتے ہیں اور آرام کا موقع بھی کم نصیب ہوتا ہے اس لئے انہیں چاہیے کہ پورے مہینے کا نظام مرتب کر لیں۔

یوں باقاعدگی سے کام بھی بہ احسن و خوبی تمام ہو گا اور تھکاوٹ بھی کم ہو گی۔خواتین نے چونکہ پورے گھر کا نظم و نسق چلانا ہے اس لئے اس مہینے میں ان کا صحت یاب رہنا ضروری ہے۔وہ نہ صرف اپنا خیال رکھیں بلکہ سحری اور افطاری کے وقت اہل خانہ کے معمولات پر بھی نگاہ رکھیں۔فارغ گھڑیوں میں آرام کریں اور عبادت کے وقت یکسوئی کے ساتھ خود کو عبادت کے لئے وقف کر دیں۔ماہ رمضان اپنی برکتوں سے انسانی بدن کو نہ صرف فاسد مادوں سے نجات دلاتا ہے بلکہ انسانی روح کو تازگی اور بالیدگی بھی بخشتا ہے۔
تاریخ اشاعت: 2021-04-20

Your Thoughts and Comments

Special Special Articles For Women article for women, read "Ramzan Ul Mubarak Aur Khawateen Ki Masrofiyat" and dozens of other articles for women in Urdu to change the way they live life. Read interesting tips & Suggestions in UrduPoint women section.