Khobsorat Haath Aap Ki Shakhsiyat Ka Izhaar Karte Hain

خوبصورت ہاتھ آپ کی شخصیت کا اظہار کرتے ہیں

Khobsorat Haath Aap Ki Shakhsiyat Ka Izhaar Karte Hain


اپنے ہاتھوں اور پیروں کو درست حالت میں رکھنے کے لئے تمام ممکنہ تدابیر ختیار کیجئے ۔یہاں کچھ مفید نسخے پیش کئے جارہے ہیں جن کے ذریعے آپ اپنے ہاتھ اور پیروں کی بہتر طور پر دیکھ بھال کر سکتی ہیں ۔
ہاتھ آپ کی شخصیت کے بہترین آئینہ دار ہیں ۔لوگ ہمیشہ خوبصورت اور عمدہ ہاتھوں کو پسند کرتے ہیں اور ان کی تحسین کرتے ہیں کیونکہ ہاتھ آپ کی شخصیت کا اسی طرح اظہار کرتے ہیں اور اسے پر کشش بناتے ہیں جس طرح آپ کا خوبصورتی کے ساتھ میک اپ کیا ہوا چہرہ ۔


آپ اپنے ہاتھوں کی دیکھ بھال پر جو وقت صرف کرتی ہیں اسے کبھی بھی رائیگاں مت سمجھئے۔تاہم ہاتھوں اور پیروں پر توجہ دینے میں آپ جو وقت صرف کرتی ہیں وہ اس وقت کا محض ایک چھوٹا ساحصہ ہے ۔جو آپ اپنے چہرے کی نگہداشت کے لئے صرف کرتی ہیں ۔

(جاری ہے)


اگر آپ یہ سمجھتی ہیں کہ ہاتھ کسی طرح کا اظہار نہیں کرتا تو ذرا ایک رقاصہ کی خوبصورت اور نفیس حرکات و سکنات پر ایک نظر ڈالئے جو اپنے ہاتھوں کی حرکات کے ذریعے مختلف قسم کے جذبات کا اظہار کرتی ہے ۔

یہ خالص شاعری ہے اور ہم اپنی روز مرہ کی زندگی میں بھی اکثر عورتوں کے ہاتھوں کی ایسی دلآ ویز حرکات و سکنات کو دیکھتے ہیں جنہیں وہ مختلف کاموں کی انجام دہی کے لئے بروئے کارلاتی ہیں ۔
ہم خود انسانوں کی حیثیت سے اپنے نظر انداز کردہ ‘کھردری کھال والے ہاتھوں کی جانب دیکھتے ہیں جن کی کوئی بھی ڈھنگ سے دیکھ بھال نہیں کی جاتی اور یہ فیصلہ کرتے ہیں کہ کل سے ہاتھوں پر توجہ دینے کا کام شروع کیا جائے گا۔


لیکن ہاتھوں کی دیکھ بھال بہت آسان ہے ۔وہ خواتین بھی جو یہ محسوس کرتی ہیں کہ ان کے پاس اس قسم کے کام کے لئے وقت نہیں ہے وہ بھی اپنی مصروفیات میں سے صرف پانچ منٹ کا وقت نکال کر اپنے بے چارے نظر انداز کردہ ہاتھوں پر کچھ توجہ دے سکتی ہیں ۔
اپنے ہاتھوں کو ایسا بنانے کی غرض سے کہ وہ دیکھنے میں خوبصورت ‘صاف ستھرے اور دلنشین نظر آئیں ‘
اپنے کام کا آغاز تراشی(Manicure)سے کیجئے۔

اس کام میں تقریباً پندرہ منٹ لگتے ہیں اور ہفتے میں ایک بار یہ کرلینا کافی ہے ۔ایک بار جب آپ کے ہاتھوں کے ناخن صاف ہو جائیں تو آپ کو ضرورت صرف اس بات کی ہے کہ اپنے ناخنوں اور ہاتھوں کو نم رکھنے کی غرض سے ان پر کوئی قدرتی تیل لگائیں ۔
مجھے یہ دیکھ کر بھی حیرت ہوئی ہے کہ ایسے فالتو اوقات میں جبکہ آپ ٹی وی کے سامے بیٹھی ہوں ‘ہاتھوں پر صرف پانی کا مساج کرنے سے بھی شاندار نتائج حاصل ہوتے ہیں ۔

اس بات کا خاص طور سے خیا ل رکھئے کہ مساج کی حرکت آپ کے دل کی جانب ہو ۔
ناخن تراشی کے لئے ایک پیالے میں صابن ملا ہوا گرم پانی لیجئے ۔اس کے علاوہ ایک چھوٹا سادستی تولیہ ‘ایک نیل فائل (Nail file)‘کاٹن وول ‘ہاتھوں کو نم رکھنے کی غرض سے ناریل کا تیل ‘نیل پالش ریموور (Remover)اور نیل پالش بھی لیجئے ۔پنک(Pink)اور پرل جیسے(Pearlised)شیڈز کو ترجیح دینا بہتر ہوگا خاص طور سے دن کے وقت۔

نیل پالش لگانے کا بہترین وقت وہ ہے جب آپ سونے کے لئے جارہی ہوں ۔اس طرح آپ کو اپنے ناخن خراب حالت میں نظر نہیں آئیں گے ۔
عنابی ‘بنفشی اور دیگر گہرے شیڈز رسمی ملبوسات کے ساتھ زیادہ میل نہیں کھاتے لیکن اگر آپ یہ محسوس کرتے ہیں کہ وہ آپ کی شخصیت سے مناسبت رکھتے ہیں تو پھر انہیں استعمال کیجئے۔بلاشبہ انفرادی پسند ایک دوسرے سے مختلف ہوتی ہے اور بعض اوقات کچھ عامیانہ قسم کی چیزیں بھی کسی شخص کے موڈ سے مطابقت رکھتی ہیں ۔


سب سے پہلے تو اپنی پرانی نیل پالش کو اتار دیجئے اور پھر اپنے ناخنوں کو فائل کیجئے۔لمبے ناخن سب سے زیادہ ان خواتین کے لئے موزوں ہوتے ہیں جن کی انگلیاں لمبی اور سبک ہوتی ہیں ۔لیکن اگر آپ کی انگلیاں چھوٹی اور موٹی ہیں تو اس بات کا خاص طور سے خیال رکھئے کہ آپ کے ناخن بیضوی شکل کے ہوں اور پوروں سے ایک انچ کے سولہویں حصے سے زیادہ آگے نکلے ہوئے نہ ہوں ۔


اس کے بعد اپنے ہاتھوں کو صابن ملے پانی میں ڈبوئیے اور دومنٹ تک ڈالے رہئے۔تولئے سے انگلیوں کی پوروں کے بالائی حصے کو بہت آہستگی کے ساتھ دبائیے۔یہ جگہ بہت نازک ہوتی ہے اور اسے نمی کی ضرورت ہوتی ہے ۔اپنے ناخنوں میں صابن کی باقیات کو بالکل صاف کردینے کی غرض سے اپنے ناخنوں کی ایک بار پھر نیل پالش ریموور کے ذریعے صفائی کیجئے۔
اس کے بعد بیس کوٹ (Base Coat)لگائیے۔

اس کا آغاز انگوٹھے سے کیجئے۔بیس کوٹ عام طور سے شفاف نیل پالش کی شکل میں ہوتا ہے جو آپ کے ناخنوں کو نیل پالش کے کیمیا وی اجزا کے باعث بدرنگ ہونے سے محفوط رکھتا ہے ۔جب یہ خشک ہوجائے تو پھر نیل پالش استعمال کیجئے۔صرف دو ہلکے کوٹ لگائیے ۔دوسرا کوٹ اس وقت لگائیے جب پہلا کوٹ مکمل طور سے خشک ہو چکا ہو۔بالآخر جب پالش مکمل طور سے خشک ہو جائے تو پھر اپنے ہاتھوں پر کلائیوں تک ناریل کا تیل ملئے۔


یہ ضروری ہے کہ نئی نیل پالش لگانے سے پہلے پرانی نیل پالش کو مکمل طور سے صاف کردیا جائے ۔ہفتے میں ایک بار مینی کیور آپ کے ہاتھوں کوٹھیک حالت میں رکھتا ہے ۔چونکہ یہ ہمیشہ بہتر ہوتا ہے کہ آپ قیمتی کریموں اور موئسچرائزر کے بجائے قدرتی چیزیں استعمال کریں ۔اس لئے قدرت سے بھی رجوع کریں اور روزرات کو تھوڑی سی بالائی یا دودھ کو ایک قدرتی موئسچرائزر کے طور پر استعمال کریں۔


اگر آپ اس میں تھوڑا سا نمک بھی ملادیں تو یہ آپ کے ہاتھوں کو زیادہ خوبصوتی کے ساتھ صاف کردے گا۔اگر آپ اپنے ہاتھوں کو دھلائی ‘باغبانی یا کسی بھی ایسے دوسرے کام میں استعمال کرتی ہیں جس کے لئے ہاتھوں کی خصوصی احتیاط کرنے کی ضرورت ہے تو اس کے لئے بہترین طریقہ یہ ہے کہ آپ دستانے استعمال کریں اور اگر آپ یہ محسوس کرتی ہیں کہ دستانے پہننا آپ کے بس کا روگ نہیں ہے تو پھر اپنے ہاتھوں پر اچھی طرح سے تیل مل لیجئے۔


آپ اپنے ہاتھوں پر ناریل کاتیل یا دودھ مل سکتی ہیں اور اس کے بعد دھلائی کاکام کیجئے۔ باغبانی کا کام کرتے وقت اس بات کا خاص طور سے خیال رکھئے کہ صابن کے چھوٹے چھوٹے ٹکڑے آ پ کے ناخنوں کے نیچے رکھے ہوئے ہوں تا کہ انگلیوں کی پوروں اور ناخنوں کے درمیان مٹی نہ جم سکے ۔
اس بات کو یاد رکھئے کہ بہت ٹھنڈا اور بہت گرم پانی ہاتھوں کے لئے نقصان دہ ہے ۔

پانی کا درجہ حرارت کمرے کے درجہ حرارت کے مساوی ہونا چاہئے ۔
سردیوں کے موسم میں ہمیشہ یہ بہتر ہو گا کہ آپ اپنے چہرے اور ہاتھوں کو ٹھنڈے پانی سے دھوئیں تا کہ قدرتی طور پر نمی پیدا کرنے والے تیل اپنی جگہ پر موجود رہیں لیکن اس کے ساتھ ہی یہ بھی ضروری ہے کہ ہر بار ہاتھ دھونے کے بعد آپ ہاتھوں پر تھوڑا سا تیل ضرور مل لیں ۔بعض زیادہ نفاست پسند خواتین ناریل کے تیل کی بو کو نا گوار سمجھتی ہیں چنانچہ آپ کھانے پکانے کا عام تیل (ککنگ آئل )یا زیتون کا تیل (Olive Oil)استعمال کر سکتی ہیں ۔


انگلیوں کو ملائم اور لچکدار رکھنے کا بہترین طریقہ یہ ہے کہ انہیں ایک خیالی کی بورڈ(Keyboard)پر چلانے کی ورزش جاری رکھی جائے۔اپنے دونوں ہاتھوں کو پھیلائیے اور پھر انہیں شتر مرغ کے پروں کی طرح حرکت میں لائیے ۔پھر اپنی کلائیوں کو گھڑی کی سوئیوں کے اندا ز میں (Clockwise)
گھمائیے۔پھر گھڑی کی سوئیوں کی حرکت کے مخالف انداز میں (Anti Clock-wise) گھمائیے۔

اگر آپ کو بہت زیادہ تحریری کام کرنا پڑتا ہے تو اپنی انگلیوں کی ورزش اس طرح کیجئے کہ اپنی مٹھیوں کو کس کے بند کیجئے اور پھر تیزی سے مٹھی کھولئے اور انگلیوں کو پھیلائیے ۔مٹھی کو بار بار اور جلدی جلدی بند کرنے اور کھولنے کی یہ ورزش آپ کی انگلیوں کو نہ صرف یہ کہ تھکاوٹ سے نجات دلائے گی بلکہ اس کی وجہ سے آپ کی انگلیوں کے جوڑوں پر فالتو مادے بھی جمع نہیں ہوں گے اور انگلیاں رواں رہیں گی۔

تاریخ اشاعت: 2019-02-07

Your Thoughts and Comments

Special Women Beauty - Khoobsurti article for women, read "Khobsorat Haath Aap Ki Shakhsiyat Ka Izhaar Karte Hain" and dozens of other articles for women in Urdu to change the way they live life. Read interesting tips & Suggestions in UrduPoint women section.