Bachay Ko Thand Se Bachaiye

بچے کو ٹھنڈ سے بچائیے!

Bachay Ko Thand Se Bachaiye

نوزائیدہ بچہ زیادہ توجہ اور دیکھ بھال چاہتا ہے۔ عموماً ہر موسم میں بچے کو موسمی اثرات سے بچانے کی ضرورت ہوتی ہے ۔اکثر مائیں سردیوں میں چھوٹے بچوں کی وجہ سے زیادہ پریشان رہتی ہیں ۔نوزائیدہ اور چھوٹے بچے آسانی سے سردیوں میں ٹھنڈ میں مبتلا ہوجاتے ہیں ۔بس ذر ا درست اقدامات کرلیے جائے تو مسئلہ آسانی سے حل ہو جاتاہے۔
ذیل میں اسی حوالے سے کچھ کار آمد ٹپس دیے جاتے ہیں جنہیں اپنا کر مائیں اپنے بچوں کو خوش اور صحت مند رکھ سکتی ہیں ۔

بچوں میں بیماریوں کے خلاف لڑنے کی طاقت کم ہوتی ہے اس لیے انہیں بہر حال خاص توجہ کی ضرورت ہوتی ہے۔
․․․․․روزانہ اپنے بچے کی صفائی ستھرائی کریں۔سردیوں میں بچے کو نیم گرم پانی سے نہلا یا جائے۔اس سے قبل کسی معیاری بے بی آئل سے بچے کے جسم کا اچھی طرح مساج کرلیں۔

(جاری ہے)


․․․․․غسل دینے کے بعد بچے کو کچھ دیر کے لیے دھوپ میں بٹھائیں۔


․․․․․․بچے کو ٹھنڈسے محفوظ رکھنے کے لیے گرم کپڑوں کا مسلسل استعمال نہ کریں ۔اس سے پسینہ آتا ہے اور ٹھنڈے پسینے کی وجہ سے اس کا امکان رہتا ہے کہ بچہ کھانسی اور ٹھنڈ میں مبتلا ہوجائے۔
․․․․․․بچے کو وقفہ وقفہ سے نیم گرم پانی دیتی رہیں تا کہ جسم میں پانی کی کمی نہ ہو۔
․․․․․ٹھنڈسے بچانے کے لیے بچے کو تھوڑی مقدار میں شہد دیں۔


․․․․․کھڑکیاں بند نہ کریں اور جب بچہ سو رہا ہو تو اس کا منہ نہ ڈھانپیں ۔اس سے بچے کو سانس لینے میں دشواری ہو سکتی ہے۔
․․․․․ہر وقت ہیٹرآن نہ رکھیں ۔اس سے بچے کو نقصان پہنچ سکتا ہے ۔
․․․․․رات میں بچے کو ہمیشہ خشک ڈائپر پہنائیں ۔
․․․․․ڈاکٹر سے مشورہ کیے بغیر بچے کو کوئی بھی دوانہ دیں۔
سردیاں اور بچے کی جلد کی حفاظت
سرد موسم میں جلد کی حفاظت کے لیے بچے کو ایکسٹراکےئر کرنے کی ضرورت ہے ۔


سردموسم جلد کو خشک کردیتا ہے جس کی وجہ سے جلد میں خارش ہونے لگتی ہے اور جلد میں نمی کم ہوجاتی ہے ۔
کچھ حفاظتی تدابیر اپنا کر مذکورہ بالامسائل سے بجا جا سکتا ہے ۔
غسل اور موئسچرائزنگ
بچے کو غسل دینے کے بعد فوراً باہر مت لے جائیے۔غسل کے بعد بچے کے پورے جسم پر موئسچرائزر کا استعمال کریں تا کہ بچے کے جسم میں نمی کی کمی نہ ہو۔

سر سے پاؤں تک لوشن کا استعمال کریں اور اس دوران خیال رہے کہ لوشن بچے کی آنکھ اور منہ میں نہ جانے پائے ۔اگر موئسچرائزر کے انتخاب میں دشواری پیش آئے تو ڈاکٹر سے مشورہ کریں۔
بچے کے ملبوسات
سرد موسم میں بچے کو گرم ملبوسات پہنانا چاہیے مگر یہ اس قدر گرم نہ ہوں کہ پسینہ آنے لگے۔بے بی جلد کی مناسبت سے نرم گرم ملبوسات ٹھیک رہتے ہیں کیونکہ سرد موسم میں بچے کی جلد اور بھی نرم ہو جاتی ہے ۔
․․․․اگر بچے کی جلد موسم سے متاثر ہو کر سرخ اور پھٹی نظر آنے لگی ہے تو ایسی پروڈکٹس استعمال کریں جس میں وٹامن اے اور ڈی موجود ہوں ۔ایسی پروڈکٹس استعمال کریں جو خصوصی طور پر بچوں کے لیے بنائی جاتی ہیں یہ پروڈکٹس لوشن کریم یا مرہم کی شکل میں آتی ہیں۔

تاریخ اشاعت: 2019-01-01

Your Thoughts and Comments

Special Child Care & Baby Care Articles article for women, read "Bachay Ko Thand Se Bachaiye" and dozens of other articles for women in Urdu to change the way they live life. Read interesting tips & Suggestions in UrduPoint women section.