EID Aa Rahi Hai Tu Gher Ko Sajain

عید آرہی ہے تو گھر کو سجالیں

پیر مئی

EID Aa Rahi Hai Tu Gher Ko Sajain
راحیلہ مغل
آج کل کورونا وائرس کی وباء کی وجہ سے اکثریت اپنے گھروں میں محصور ہو کر دن گزار رہی تھی ۔کہ ماہ رمضان کی آمد نے خوشیوں کے کئی رنگ بکھیر دئیے پہلے لوگ وباء کی باتیں کرتے رہتے تھے لیکن اب ماہ رمضان میں سحری افطاری کی باتیں ہو رہی ہیں اور اب جبکہ عید قریب آرہی ہے تو سب کو عید کے کپڑوں کی فکر کے ساتھ ساتھ گھر کی سجاوٹ کی فکر کھائے جا رہی ہے کیونکہ بچوں کو چھٹیاں ہیں اور بڑوں کے کاروبار بند ہیں لہٰذا سب گھروں میں موجود ہیں ایسے میں خواتین کی ذمہ داریوں میں کئی گنا اضافہ ہو چکا ہے اور اب جبکہ عید بھی قریب ہے تو خوشی کے ساتھ ساتھ کئی طرح کی فکریں بھی ہیں ۔

ایسے میں ہم نے سوچا کہ خواتین کو گھرکی سجاوٹ کے مشورے دئیے جائیں کیونکہ عید ایک ایسا روایتی مذہبی تہوار ہوتا ہے کہ جس کا نام سنتے ہی سب کے چہروں پر خوشی کی لہر دوڑ جاتی ہے ۔

(جاری ہے)

نئے کپڑے ،نئے جوتے ،تحفے تحائف ،میٹھی میٹھی مزے دار ڈشز ،کئی پرانی اشیاء کی جگہ نئی دیدہ زیب چیزوں کی خریداری وغیرہ وغیرہ ۔یہ ساری چیزیں عید کا لطف اور مزہ دوبالا کر دیتی ہیں ۔

اس کے علاوہ ،عید ،گھر کو نیاپن اور تازگی دپنے کا بھی ایک بہترین موقع ہوتا ہے ۔یہ بات کبھی نہ بھولیں کہ محض زیادہ سے زیادہ سامان بھر دینے سے گھر کی دیدہ زیب سجاوٹ کبھی نہیں ہوتی ۔اصل خوبصورتی اس وقت آتی ہے جب سامان ترتیب سے رکھا جائے ۔اس لئے اگر آپ تعداد میں کم اور گنجائش میں زیادہ چیزیں خریدیں گے تو گھر بھی سج جائے گا اور خوب صورت بھی لگے گا۔

تو پھر آئیے اس عید پر کم بجٹ میں گھر کی تزئین وآرائش کے کچھ منفرد خیالات پر نظر ڈالتے ہیں۔
باورچی خانہ
ہر گھر میں کچن ایک اہم جگہ ہوتی ہے جس کی خوبصورتی پورے گھر پر اثر انداز ہوتی ہے ۔اپنے کچن پر نظر دوڑائیں اگر آپ کو کچن کیبنٹس پرانے لگ رہے ہیں تو تبدیل کرنے کے بجائے انھیں دوبارہ پینٹ کرلیں یہ ان کی بالائی شیٹ تبدیل کر لیں کیونکہ مرد حضرات بھی گھر پر ہیں لہٰذا وہ خوشی خوشی یہ سب کر سکتے ہیں تو ان کی موجودگی کا فائدہ اٹھائیں اور کچن کو ایک نئی لک دیں ۔

مزید یہ کہ بوسیدہ اور ناکارہ چیزوں کو باورچی خانہ سے ہٹائیں اور اسے کشادہ ،دلکش اور خوبصورت انداز میں ترتیب دیں۔
ہال کی تزئین وآرائش
گھر میں داخل ہوتے ہی آپ کا ہال یا انٹرنس روم ہوتا ہے ،جس کی سیٹنگ اور ڈیکوریشن مہمانوں کو سب سے پہلے متاثر کرتی ہے ۔اس لئے فرنیچر ہال کی دیوار کے ساتھ رکھیں اورکمرے میں متضاد کلرز استعمال کریں ۔

روشنی کے لئے لائٹ کا عمدہ انتظام ہال کی خوبصورتی میں اضافہ کرے گا اور یہ ایک بہترین ویلکم روم ہو گا۔ کوشش کریں کہ ہال میں آپ کے جوتے اور چابیاں رکھنے کے لئے بھی ایک جگہ مختص ہو۔
ڈرائنگ روم
عید کے موقع پر آپ کا ڈرائنگ روم سب سے زیادہ استعمال میں آتا ہے اور آپ کے گھر کا یہی حصہ مہمانوں کے سامنے سب سے زیادہ رہتا ہے ۔

اس کا مطلب یہ ہوا کہ آپ کو سب سے زیادہ توجہ بھی ڈرائنگ روم کی تزئین و آرائش پر ہی دینی چاہیے ۔ڈرائنگ روم کے پردے اور فرنیچر صاف کرلیں ۔اگر آپ کے پاس شو پیس ہیں تو اُسے عید کے موقع پر ڈرائنگ روم کا حصہ بنائیں اور لائیٹ کا اچھا انتظام کریں اس طرح پتہ چلے گا کہ آپ ایک سلیقہ مند خاتون ہیں۔
حسین خواب گاہ
خواب گاہ کی تزئین وآرائش کے لئے آپ مندرجہ ذیل تجاویز پر غور کر سکتے ہیں۔

بیڈ پر رکھنے کے لئے دیوار کے ہم رنگ تکیوں کو استعمال کریں۔ یہ بیڈ روم کی خوبصورتی میں اچھا اضافہ ہو گا۔ بیڈ کے دونوں طرف لیپ کا استعمال خوبصورت لگتا ہے ۔سونے کے کمرے میں بیڈ کے ساتھ ،میچنگ اسٹول اور کرسی رکھنے سے ناصرف اس میں بیٹھنے کے لئے جگہ کا انتظام ہو گا بلکہ اس سے کمرہ خوبصورت بھی لگے گا۔ پورے کمرے میں خوبصورت اور ہلکے پردوں کا استعمال کیجیے۔

یہ آپ کے بیڈ روم کو بہت خوبصورت بنا دے گا۔
بچوں کا کمرہ
بچے عید کا سب سے زیادہ بے صبری سے انتظار کرتے ہیں ،اس لئے جب آپ عید پر گھر کی تزئین وآرائش کا سوچ رہی ہیں ،تو بچوں کے کمرے پر خاص توجہ دیں ۔کمرے میں زیادہ فرنیچر نہ رکھیں تاکہ بچوں کو چہل پہل ،کھیل کود اور کے لئے کھلی جگہ زیادہ سے زیادہ دستیاب ہو سکے ۔مزید یہ کہ ،جو مٹیریل بچوں کے کمرے میں استعمال ہو ،وہ اس قسم کا ہو کہ اس کی صفائی کرنا آسان ہو۔


صحن کو بھی سجائیں
قدیم دور سے مشرقی گھروں کی تعمیر اس طرز پر کی جاتی رہی ہے کہ ایک بڑا سا آنگن ہو جو پھول پودوں سے سجا ہو۔ گھر کا یہ حصہ ایک ہی وقت میں کہیں گارڈننگ توکہیں ڈائٹنگ،کہیں آرٹ تو کہیں ڈیکوریشن کا خوبصورت نفا رو پیش کرتا ہے ۔گھر کے اندرونی ماحول سے اکتاہٹ محسوس ہونے لگتی ہے تو خوبصورت بیرونی ماحول سیکنڈوں میں مزاج کو خوشگوار کر دیتا ہے ۔

سردی کی دوپہر ہو یا گرمی کی راتیں، صحن گھر کا ایک اہم حصہ جو مکینوں کو راحت پہنچانے کے ساتھ ساتھ گھر کی خوبصورتی کو بڑھانے میں بھی اہم کردار ادا کرتاہے۔
صحن میں پودے لگانے سے اس کی خوبصورتی میں کئی گنا زیادہ اضافہ ہو جاتا ہے ۔زمین پر قطار سے پودے رکھ دینے کا اسٹائل خاصا پرانا ہے ۔اگر آپ کے پاس جگہ کم ہے تو عمودی طرز کا باغیچہ بہترین انتخاب ثابت ہو سکتا ہے کیونکہ نہ صرف یہ جگہ کم گھیرتا ہے بلکہ اس کی دیکھ بھال بھی آسان ہے ۔

عمودی طرز پر پودوں کی سجاوٹ مختلف طریقوں سے کی جاتی ہے ۔لو ہے سے تیار کیا گیا اسٹینڈ لگا کر اس پر پودے لٹکائے جا سکتے ہیں ۔ایک دیوار کو صرف ہر یالی کے مختص کرتے ہوئے اس دیوار کو ہری بیلوں سے ڈھانپا جا سکتاہے ۔صحن میں جب تک پودے یا پھول نہ لگے ہوں تب تک ایک مکمل ماحول ترتیب نہیں دیا جا سکتا تو اس عید پر اپنے گھر اور آنگن کو اتنا خوبصورت بنائیں کہ دیکھنے والے دیکھتے رہ جائیں۔
تاریخ اشاعت: 2020-05-18

Your Thoughts and Comments

Special Home Interior & Decoration - Ghar Ki Aaraish article for women, read "Eid Aa Rahi Hai Tu Gher Ko Sajain" and dozens of other articles for women in Urdu to change the way they live life. Read interesting tips & Suggestions in UrduPoint women section.