2018 Main Make Up Traineds Kya Hai

2018 میں میک اپ ٹرینڈ ز کیا ہیں؟

پیر اگست

2018 Main Make Up Traineds Kya Hai

زارا مصطفی
ہر عورت نمایاں اور منفرد آناچاہتی ہے یہی وجہ ہے کہ وہ فیشن اور سٹائل کی دنیا کے لمحہ بہ لمحہ بدلتے رجحانات سے با خبر ہے ۔اس کے لئے کبھی وہ اپنی پسند یدہ اداکاراؤں کے پہننے اوڑھنے اور سجنے سنورنے کے انداز جانچتی ہیں تو کبھی ٹی وی ،اخبارات اور رسائل کو کھنگا لتی ہے ۔خواتین کی اسی فطری ضرورت اور خواہش کو مِد نظر رکھتے ہوئے معروف میک اپ آرٹسٹ اور سٹائلسٹ حسین رضا کے مطابق ”دنیا بھر میں 2018کو میک اپ اور سٹائلنگ کے حوالے سے گذشتہ برسوں کی نسبت زیادہ گلیمرس اور فیشن زدہ سال قراردیا جارہا ہے ۔

اس سال کئی نئے میک اپ ٹرینڈز متعارف کروائے جارہے ہیں جن میں نمایاں ”گلوئی گلوسی تھری ڈی ہائی لائٹڈ سکن “ ہے ۔آسان الفاظ میں بتایا جائے تو گلوئی گلوسی سے مراد نکھری اور چمکدار جبکہ ہائی لائٹڈ سے مراد چہرے کے تمام خدوخال کاغیر معمولی طور پر نمایاں اورخوشنما نظر آنا ہے یعنی اس میک اپ سے رخسار اور ان کی اوپری ہڈی ،ماتھا اور ناک واضح دکھائی دیتے ہیں اور تھری ڈی کا مطلب ہے کہ جب چہرے پر ” گلوئی گلوسی ہائی لائٹڈ “ میک اپ کیا جاتا ہے تو چہرے کے خدوخال تصویروں میں یا قریب سے دیکھنے میں ”تھری ڈی “ کا تاثر دیتے ہیں جس سے میک اب خاصا گلیمرس دکھائی دیتا ہے ۔

(جاری ہے)

میک اپ کا یہ اندازموسمِ سرما میں خواتین میں خاص مقبولیت حاصل کر رہا ہے یعنی 2018کے آغاز اور اختتام میں اس میک اپ کا رواج عام رہے گا لیکن گرمیوں میں میٹ اور ہلکا پھلکا میک اپ ہی ” ان “ رہے گا ۔“
برائیڈ ل میک اپ کے جدید رجحانات کیا ہوں گے ؟
حسین رضا کے مطابق ” آج کل لڑکیاں زیادہ بھاری بھرکم برائیڈل میک اپ پسند نہیں کرتیں ۔

تا ہم میک اپ میں چہرے کا سب سے نمایاں حصہ آنکھیں سمجھی جا تی ہیں اس لئے آنکھوں کا میک اپ جس قدر خوشنما ہو ،چہرے کا تا ثر اتنا ہی پُر کشش دکھائی دیتا ہے اسی لئے برائیڈل میک اپ میں بھی آئی میک اپ کوخاص اہمیت دی جاتی ہے ۔رواں برس دلہنوں میں ایک سے زائد نمایاں اور گہرے آئی شیڈز لگانے کا رجحان نسبتاََ کم ہورہا ہے اور ہلکے پھلکے آئی شیڈز کے ساتھ گلیٹر کا استعمال کرکے شمری آی میک اپ کو ترجیح دی جارہی ہے ۔

دوسری طرف بھاری بھرکم ’آئی لیشز‘یعنی پلکوں کا رجحان اور مرتبہ پھر بڑھ رہا ہے ۔موسم سرما میں عام طور پر آنکھوں کے لئے ریڈ،برگنڈی اور براؤن آئی شیڈز خوشنما لگتے ہیں ۔وِنگ یعنی پَر کی شکل میں لائنر کا استعمال بہت زیادہ رہے گا ،کاجل کا فیشن آؤٹ ہو چکا ہے اس کی جگہ آپ آنکھوں کے اندر گولڈن یا سلور آئی پنسل استعما ل کر سکتی ہیں ۔موٹی آئی بروز یعنی بھنوؤں کا رجحان ابھی برقرار ہے ،اگر آپ کی آئی بروز قدرتی طور پر ہلکی یا غیر نمایاں ہیں تو انہیں آئی برو پنسل یا آئی برو پاؤڈر کے استعمال سے بھی نمایاں کیا جاسکتا ہے ۔

خیال رہے کہ آپ کے چہرے کی جلد کا مجموعی تاثر ‘ گلوسی ‘ ہونا چاہیے مگر ہونٹوں کے لئے لپ سٹک اور لپ گلوس کا انتخاب کرتے ہوئے گہرے رنگوں میں میٹ لپ کلرز ہی استعمال کریں ۔چونکہ رواں برس چمکدار انداز میں میک اپ کا رواج ہے اس لئے اپنے ’چیک بونز ‘یعنی رخسار کے اوپری ہڈیون کو فاؤنڈیشن اور ہائی لائٹر کے استعمال سے چمکدار بنائیں ۔

بھاری بھر کم بیس نہ لگائیں ،بلش آن کے لئے پنک اور پیچ شیڈز ہی فیشن میں ہیں ۔جہاں تک برائیڈل ہےئر سٹائلز کی بات ہے تو رواں برس ان میں کوئی خاص تبدیلی نظر نہیں آرہی اس لئے اگر دلہن کی سج دھج کا انداز روایتی ہے تو سائیڈبنز ،کرلز اور بریڈز ہی بہترہیں لیکن جود لہنیں جدید اور مغربی انداز میں سجنا سنور ناچاہتی ہیں تو وہ ’بیک کو مبنگ ‘کے ذریعے بالوں کو بھاری بھرکم تاثر دے سکتی ہیں ۔

نیل آرٹ کا رواج گذشتہ سالوں کی نسبت اس سا ل زیادہ نمایاں نظر آرہا ہے اور اب پہلے سے کہیں زیادہ جدید اور تکنیکی انداز اپنائے جارہے ہیں ،وقتی استعمال کے لئے سٹیکر والے نیل آرٹ کا رجحان بھی کم ہو گیا ہے اور تو اور پہلے صرف لیکوئیڈ نیل پالشز ہی ملتی تھیں اب جدید طرز کی مٹیلک اور پاؤڈر شکل کی نیل پالشز بھی خاصی مقبو ل ہورہی ہیں جنہیں خاص انداز میں لگا یا جاتا ہے ۔


ورکنگ ویمن اور طالبات کون سے انداز اپنائیں ؟
عام زندگی میں نوعمر لڑکیوں ،کالج ویونیورسٹی کی طالبات اور جاب کرنے والی خواتین کو چاہیے کہ کم سے کم میک اپ استعمال کریں ہاں مگر اپنے بالوں پر زیادہ توجہ دیں ۔وہ ہائی پونی ٹیل ،سائیڈمیسی بن یا پیچھے کی جانب چھوٹا سا جوڑا بھی بنا سکتی ہیں ۔اس کے ساتھ سیدھے بالوں سے زیادہ گھنگھر یالے اور الجھے بال زیادہ مقبول ہوں گے ۔

جہاں تک ہےئر ڈائی کی بات ہے تو آج کل” سٹریکس “اور ”بلیاج “ کا رواج عام ہو رہا ہے اس سے پہلے ”اومبرے “ کافی مقبول رہا مگر رواں برس یہ فیشن سے آؤٹ ہو گیا ہے دھوپ سے بچنے کے لئے سن بلاک کا استعمال ہرگز نہ بھولیں تا کہ جلد تر و تازہ رہے ۔خصوصاََ سردیوں میں میٹ فاؤنڈیشن استعمال کریں ،آنکھوں کے گرد گہرے حلقوں اور چہرے کے داغ دھبوں کو چھپانے کے لئے ہلکاسا کنسیلر لگانے کے بعد قدرتی تاثر دینے والے لپ کلرز لگالیں،چاہیں تو خصو صاََشام کے وقت آپ گہرے رنگوں کے لپ کلرز بھی لگا سکتی ہیں ۔

دن کے وقت آپ زیادہ میک اپ نہیں کرناچاہتیں تو گہرے رنگ کے لپ کلرز لگانے میں بھی حرج نہیں ۔عام طور پر نو عمرلڑکیاں کا جل کا استعمال بہت زیادہ کرتی ہیں جواب فیشن میں نہیں ہے ،ہو سکے تو شام کی تقریبات کے لئے آنکھوں میں وائٹ آئی پنسل لگالیں ۔اگر آپ کسی تقریب میں جانے کے لئے تیار ہورہی ہیں یا جاب پر جانے کے لئے آپ کو باقاعدہ میک اپ کرنا اچھا لگتا ہے تو بیس لگانے سے پہلے چہرے پر پرائمر لگانے کے بعد ’الیو مینیٹر ‘ضرور لگائیں جو کہ چہرے کو چمکدار بنانے کے لئے استعمال کیاجاتا ہے اس کے بعد میٹ فاؤنڈیشن لگا کر اسے جلد میں اچھی طرح جذب کر لیں ۔

اگر آپ آئی میک اپ کرنا چاہتی ہیں تو بلش آن استعمال نہ کریں اور اگر آئی میک اپ نہیں کرنا چاہتیں تو بلش آن لگالیں مگر آئی میک اپ اور بلش آن کے ساتھ ہر گز استعمال نہ کریں ۔دن کے وقت چمکدار آئی شیڈز سے بھی گریز کریں کیونکہ یہ صرف شام کی تقریبات میں ہی اچھے لگتے ہیں ۔گر میوں میں کم سے کم اور ہلکا پھلکا میک اپ کریں کیونکہ گرمیوں میں چمکدار جلد اچھی نہیں لگے گی اس لئے میٹ اور پیسٹل میک اپ شیڈز ہی استعمال کریں ۔“

تاریخ اشاعت: 2018-08-20

Your Thoughts and Comments

Special Makeup Tips, Suggestions & Tutorials article for women, read "2018 Main Make Up Traineds Kya Hai" and dozens of other articles for women in Urdu to change the way they live life. Read interesting tips & Suggestions in UrduPoint women section.