بند کریں
خواتین مضامینباغبانی

باغبانی

سیملیا

ہ دلکش اور آہستہ آہستہ بڑھنے والی سدا بہار جھاڑی ہیں اور زرخیز زمین میں تیزی سے پھیلتی پھولتی ہے اس پر گہرے سبز رنگ کے چمکدار پتے لگتے ہیں اور پھولوں کی وضع قطع بڑی دلفریب ہوتی ہیں

دلکش خوشبو دار جھاڑیاں

یہ ایک ایسا سدا بہار اور تیزی سے پھلنے پھولنے والی جھاڑی ہے اور اپنے چھوٹے چھوٹے سفید پھولوں کی مست کردینے والی خوشبو کے باعث بہت مشہور ہیں اس کا قد 5 سے 7 فٹ تک ہوتا ہے

آرائشی بیلیں

بیلوں کو درختوں دیواروں اور دروازوں پر چڑھایا جاتا ہے ان کے لیے لکڑی کے دروازے اور چوکھٹے لگائے جاتے ہیں کیونکہ بیل دار پودوں کے تنے لمبے پتلے اور نازک ہوتے ہیں

اسپیراگس

اس کی لمبائی تین فٹ سے چھ فٹ تک ہوتی ہے ہرے رنگ کی باریک پتیوں والی اس کی لٹکتی ہوئی شاخیں بڑی دلکش دکھائی دیتی ہے

زینیا

یہ باغوں اور پھلواڑیوں کی خاص زینت ہے اس کے پھولوں کے کئی رنگ ہوتے ہیں سرخ گلابی سفید اور نیلے پھول اکتوبر نومبر تک نکلتے رہتے ہیں جو بہت خوبصورت ہوتے ہیں

سورج مکھی

سورج مکھی چار سے چھ فٹ بلندی تک بڑھتا ہے اور سیدھا ہوتا ہے اسے کناروں پر اور قدرتی باڑ کے طور پر لگایا جاتا ہے کھلی دھوپ میں خوب پھلتا ہے

املتاس(Cassia Fistula)

گرمیوں میں جب تمام درختوں اور پودوں کے پھول کم ہوجاتے ہیں تو جون جولائی میں صرف املتاس پر ڈھیروں پھول آتے ہیں اور اس کی خوبصورتی بڑھ جاتی ہے

خوشنما درخت

اسے سفید پھولوں والی کچنار بھی کہا جاتا ہے اور دنیا کے خوبصورت ترین درختوں میں اسے بطور خاص مقبولیت حاصل ہے یہ ایک سدا بہار پودا ہے 8 سے15 فٹ تک اونچا بڑھتا ہے

پھل دار پودوں کو سردی سے بچانا

سرد ہوائیں نوخیز پودوں کے اوپر کے حصے پر زیادہ اثر انداز ہوتی ہے اگر پودوں کے تنوں پر ان کا اثر پڑے تو پودوں کے مرجانے کا خطرہ ہوجاتا ہے کیونکہ سرد ہوا یا کہرے سے تنے کی چھال پھٹ کر پودے سے علیحدہ ہوجاتی ہے

پودوں کا انتخاب

پودے طاقت ور تندرست اور خوش نما ہوں اور وہ کسی قسم کی بیماری کا شکار نہ ہوں پودوں کی عمر عموماً ایک سال ہونی چاہیے کیونکہ ایک توان کی گاچی آسانی سے جڑیں کاٹے بغیر نکالی جاسکتی ہے

مالٹا

کسی ذخیرے میں تیار شدہ پودے فروری مارچ یا برسات کے موسم میں مقررہ جگہوں پر لگائے جائیں اسے گرمی کے موسم میں تین چار دنوں بعد اور سردیوں میں زیادہ وقفے سے پانی دینا مفید ہے

انگور

انگور مختلف قسم کی آب وہوا میں کامیاب ہوجاتا ہے اور گرم میدانی علاقوں سے لے کر پانچ چھ ہزار فٹ کی بلندی تک آگایا جاسکتا ہے لیکن پھول آنے سے پھل پکنے تک کے عرصے میں بارش ہوجائے تو پھل نہیں رہتا یا پھل پودے پر ہی گل سڑجاتا ہے
فہرست 1 سے 12  تک   (18 ریکارڈز )