Stage Drama

اسٹیج ڈرامہ

جمعرات جنوری

اسٹیج ڈرامے کے دوران ایک کارکن دوڑتا ہوا پروڈ یوسر کے پاس پہنچا، پروڈیوسر اس وقت ڈریسنگ روم میں چائے پی رہا تھا، اس نے پوچھا:”کیا بات ہے، اتنے گھبرائے ہوئے کیوں ہو؟“ ”سر! وہ ہیرو نے ولن کو گولی مار دی ، لیکن ولن نے چپکے سے ہاتھ بڑھا کر مجھے یہ چٹ تھمادی ہے۔

(جاری ہے)

“ کارکن نے چٹ پروڈ یوسر کو تھماتے ہوئے کہا۔ اس پر لکھا تھا:”میرے بقایا جات پچھلے پر دے سے مجھے دے جاؤ، ورنہ میں مرنے کے باوجود اٹھکر کھڑا ہو جاؤں گا۔ “

Your Thoughts and Comments