Koi Na Cheen Sake Ik Shay - Puzzle No. 539

کوئی نہ چھین سکے اک شے

koi na cheen sake ik shay

مزید پہیلیاں

ذرا تھپک کر اسے اٹھایا

Zara Thapak Ke Usay Uthaya

اوروں کے قبضے میں‌ ہے

Auro Ke Qabzy Me Hai

روڑوں کے اندر تھے روڑے

Roro Ke Andar Thy Rory

جس نے بھی وہ ساز بجایا

Jis Nay Bhi Woh Saaz Bajaya

ایک ہے ایسا قصہ خوان

Aik Hi Aisa Qissa Khan

کل کا بچہ ایک نادان

Rakhi Thi Wo Chup Chaap Kaise

یا وہ آتا ہے یا وہ جاتا ہے

Ya Wo Aata Hai Ya Wo Jata Hai

اک شے جب بھی ہاتھ میں آئے

Ek Shay Jab Bhi Hath Me Aye

سر پہ نور کے تاج سجائے

Sar Pe Noor Ke Taaj Sajaye

جانور اک ایسا بھی دیکھا۔۔۔

Janwar Aik Aisa Bhi Dekha

ایسا نہ ہو کہ کام بگاڑے

Aisa Na Ho K Kam Bigary

سینہ چھلنی رنگت گوری

Seena Chalni Rangat Gori

Your Thoughts and Comments

>