Sohan Halwa Tips in Urdu - Sohan Halwa Totkay

سوہن حلوا کا آسان گھریلو ٹوٹکہ

Sohan Halwa Recipe In Urdu


اجزاء:
نشاستہ ایک کلو
چینی بارہ کلو پانچ سوگرام
عرق لیموں ۳گرام
فالتو پانی بیس گرام
ترکیب:
ایک سیر نشاستہ کو فالتو پانے میں طرح سے پھینٹ لیں اسے اچھان کر دوسرے برتن میں رکھ لیں
ساڑھے بارہ کلو چینی کی چاشنی تیارکرکے کچی کسی سے اچھی طرح صاف کرلیں اور کسی ململ کے کپڑے سے پن کر لیموں کا عرق ڈال کر آگ پر سے اتار لیں ۔ڈھائی کلو میدہ نیز ڈھائی کلو گرم کرکے پگھلاہوا اور کپڑے سے چھنا ہوا دیسی گھی ڈال کر کڑاہی کو آ گ پر رکھکر مسد سے ہکاتےء جائیں جب تما م مرکب اچھی طرح سے حل ہوجائے تواسے بھی آگ سے اتار کر رکھ لیں ۔ایک صاف شدہ کڑاہی کو آگ پر رکھ دیں ۔اب ایک آدمی میدہ اور گھی کامرکب کڑاہی میں ڈال کر آہستہ آہستہ کھرپی سے ہلاتاجائے ۔ہلاتے جائیں اور دوسرا آدمی نشاستے کا چھنا ہوا پانی کسی ڈوھری سے دھار باندھ کرمیدہ اور گھی کے مرکب کو کڑاہی میں ڈالتا جائے ۔جب تک پانی ختم ہوجائے آپ چینی کی چاشنی ملاکر کھرپی سے اچھی طر ہلاتے جائیں ۔جب ایک ابال آ جائے تو کڑاہی کو نیچے اتار کر کھرپی سے ہلاتے ہیں اور ٹھنڈا ہونے پر دوسرے برتن میں ڈال دیں ۔اس مرکب کو پیتل کہتے ہیں جوکہ شام کو تیار کرنا جاہیے ۔ دوسرے دن صبح اس سے حلوہ تیار کرنا جاہیے ۔دوسرے دن صبح اس حلوئے کو تیارکریں جس کا طریقہ درج ذیل ہے :
حسب ضرورتگھی کو گرم کریں پگھلا کر پاس رکھلیں ۔اور پیتل کو کڑاہی میں چڑھا کر گرم کریں ۔جب مرکب گاڑھا ہوجائے تب دوسو پچاس گرام ٹھنڈا گھی ڈال کر کھرپے سے ہلا تے ہیں ۔جب تمام گھی حلوے میں جذب ہوجائے تو تب دوسو پچاس گرام اور گھی ڈال دو ۔ اور اسے بھی جذب ہونے دیں ۔ ایسا پانچ چھ مرتنہ کرنا پڑے گا یعنی گھی کو اس وقت تک حلوے میں ہلاتے جائیں جب تک کہ حلوا گھی نا چھوڑنے لگے گھی چھوڑنے پر گھی ملانا بند کر دیں اور اس مرکب کو پھٹکا رکر ہلاتے جائیں ۔جب رنگت بادامی ہو جائے تو کسی سلائی سے نکال کر ہاتھ سے توڑیں اگر کڑاک کی آواز دے تو سمجھ لیں کہ حلواتیارہوگیا ہے اب اسے پھرتی سے تھال میں انڈیل لیں اور اس تھال کو کسی دوسرے تھال میں انڈیل لیں اور تھال کو کسی دوسرے تھال میں جس میں پانی بھراہے رکھ دیں اور ٹھنڈا ہونے دیں ۔یہ دھیان رہے کہ نیچے
کے تھال کا پانی زیدہ نہ ہوورنہ اوپر کا تھال پانی میں ڈوب جائے گا ۔
اوپر کے تھال میں پانی آ جائیگا اور پانی حلوے کو خراب کر دے گا ۔اس لئے آ گ درمیانہ قسم کی ہونی جاہیے ۔نہ بہت زیادہ نہبہت کم کیوندہ آگ کم ہونے کی صورت میں حلوا سوہن کے تہ میں بیٹھنے کا یا جمنے کا خدشہ رہتا ہے ۔اور زیادہ آ گ کی وجہ سے حلوا جل کر کڑوا ہونے کا ڈر ہوتا ہے ۔اس لئے دومیانی آگ رکھنی جاہیے ورنہ حلوہ جل کرکڑدا ہو جائیگا۔

More From Halwa Jaat - مزید