Amaal Se Zindagi Banti Hai - Article No. 132

عمل سے بنتی ہے زندگی

عمیر میرے بھائی ہجرت مکہ کے وقت حالات کچھ اور تھے اور آج کچ اور ہیں اور یہ سب کچھ کرنا حکومت وقت کی ذمہ داری ہے کہ وہ مہاجرین کی رہائش اور خوراک کا بندوبست کرے

منگل 11 اگست 2009

Amaal Se Zindagi Banti Hai
Amaal Se Zindagi Banti Hai
Amaal Se Zindagi Banti Hai

مزید متفرق مضامین

Seedha Rasta

سیدھا راستہ

Seedha Rasta

Nayi Cheez Naya Zaiqa

نئی چیز، نیا ذائقہ

Nayi Cheez Naya Zaiqa

Maan Ka Mazaq

ماں مذاق

Maan Ka Mazaq

Phata Huwa Dhol

پھٹا ہوا ڈھول

Phata Huwa Dhol

Chori Khul Gaye

چوری کھل گئی

Chori Khul Gaye

Nayi Subha

نئی صبح

Nayi Subha

2 Parosi

دو پڑوسی

2 Parosi

Mohsin

میرا محسن

Mohsin

Hum Kasie Bhula Sakte Hain

ہم کیسے تمہیں بھلا سکتے ہیں

Hum Kasie Bhula Sakte Hain

Phool Sathion K Naam

پھول ساتھیوں کے نام

Phool Sathion K Naam

Mehnat Main Azmat Hai

محنت میں عظمت ہے

Mehnat Main Azmat Hai

Jahan Aaloodgi Daam Torti Hai

جہاں آلودگی دم توڑتی ہے

Jahan Aaloodgi Daam Torti Hai

Your Thoughts and Comments