Deeni Aur Dunyavi Taleem

Deeni Aur Dunyavi Taleem

دینی اور دنیاوی تعلیم

دنیاوی تعلیم کے ساتھ ساتھ دینی تعلیم بھی ازحد ضروری ہے،ہم مسلمان ہیں اور ہمارا مذہب اسلام ہے جبکہ اسلامی تعلیمات ہی ہمارے لئے مشعل راہ ہے

رامین:
دنیاوی تعلیم کے ساتھ ساتھ دینی تعلیم بھی ازحد ضروری ہے،ہم مسلمان ہیں اور ہمارا مذہب اسلام ہے جبکہ اسلامی تعلیمات ہی ہمارے لئے مشعل راہ ہے،اسلام سے دوری دین سے دوری ہے۔اسلامی تعلیمات اپنانے اور اس پرعمل پیرا ہونے سے ہی ہماری آخرت سنور سکتی ہے۔

زیادہ تر والدین انگلش میڈیم سکولوں کوترجیح دیتے ہیں،وقت کے ساتھ ساتھ سرکاری وغیر سرکاری انگلش میڈیم سکولوں میں داخلہ وقت کی اہم ضرورت بن گئی ہے اور وقت کے مطابق چلنا اچھی بات ہے ،یہی وجہ ہے کہ والدین اپنے بچوں کو داخل کروانے کے لئے انگلش میڈیم سکولوں کا رْخ کرتے ہیں۔
ایسے سکولزبھی ہیں جن میں زیر تعلیم طلبہ و طالبات کو دینی اور دْنیاوی تعلیم دی جاتی ہے لیکن ایسے سکولوں کی تعداد آٹے میں نمک برابر ہے،سکول کوئی بھی ہو اس میں پہلا پیریڈ قرآن پاک بمعہ ترجمہ ہونا چاہئے اس ترجمہ کا مطلب بچوں کو سمجھانا چاہئے تاکہ بچوں کو یہ علم ہوکہ قرآن پاک ہمیں کیا سیکھاتا ہے اس پر عمل کر کے ہم دْنیا وآخرت میں کامیابی حاصل کر سکتے ہیں اور یہ بھی حقیقت ہے کہ جنہوں نے قرآن پاک پر عمل کیا کامیابی اس کا مقدر بن گئی۔

(جاری ہے)


ارفع پبلک سکول (ٹرسٹ) اسلامی اور انگلش تعلیم کا حسین امتزاج ہے ارفع پبلک سکول تجارت نہیں عبادت کے نیک جذبہ سے آج سے ایک سال قبل مکمل کیا گیا تھا سکول کی عمارت جدید تقاضوں کے ہم آہنگ ہے 42 کشادہ کلاس رومز پر مشتمل ہے یہاں پر 1200 طلبا و طالبات کے داخلہ کی گنجائش ہے اس وقت طلبا و طالبات کی تعداد 200 کے قریب ہے جبکہ نرسری تا مڈل داخلہ جاری ہے یہاں پر داخلہ مکمل فری ہے فیس کا اختیار بھی طلبا کے والدین کو دیا گیا ہے کہ جو فیس وہ آسانی کے ساتھ دے سکیں وہ دیں غریب نادار اور یتیم طلباء کے لئے فیس کی کوئی حد مقرر نہیں ارفع پبلک سکول کے چیف آرگنائز ابوعمر شیخ محمد نعیم بادشاہ نے ایک ملاقات میں بتایا کہ ارفع پبلک سکول تعمیر کرنے کا مقصد عام لوگوں تک معیاری تعلیم سے روشناس کروانا ان کا عزم ہے کہ عام آدمی کا بچہ بھی اعلیٰ تعلیم حاصل کر کے معاشرے کا ایک اہم فرد بن کر ملک و قوم کی بھر پور خدمت کر سکے نعیم بادشاہ نے بتایا کہ وہ ارفع پبلک سکول کو جلد میٹرک کا درجہدینگے اور وہ مستقبل میں ایک بڑے کالج کی تعمیر کا بھی ارادہ بھی رکھتے ہیں۔
گزشتہ دنوں ارفع پبلک ٹرسٹ سکول میں سالانہ تقریب کا اہتمام کیا گیا جس میں نامور سیاسی شخصیات نے شرکت کی،سکول کے پہلے سالانہ امتحانات کے نتائج کے موقع پر اول، دوم اور سوئم آنے والے طلبا و طالبات انعامات سے نوازا گیا یہ انعامات قومی اسمبلی کے رکن جناب پرویز ملک نے تقسیم کئے۔

Your Thoughts and Comments