وزارت منصوبہ بندی ترقی و اصلاحات نے رواں مالی سال کے دوران سرکاری شعبہ کے ترقیاتی پروگراموں کے لئے 6 کھرب 7ارب 44کروڑ روپے کے فنڈز جاری کئے

بدھ اپریل 12:15

وزارت منصوبہ بندی ترقی و اصلاحات نے رواں مالی سال کے دوران سرکاری شعبہ ..
اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 اپریل2018ء) وزارت منصوبہ بندی ترقی و اصلاحات نے رواں مالی سال 2017-18ء کے دوران سرکاری شعبہ کے ترقیاتی پروگراموں کے لئے 6 کھرب 7ارب 44کروڑ 35لاکھ روپے سے زائد کے فنڈز جاری کئے ہیں۔ پلاننگ کمیشن کے ذرائع کے مطابق حکومت نے رواں مالی سال کے دوران ترقیاتی پروگرام کے تحت مختلف ٹرانسپورٹ و کیمیونیکیشن، واٹر، سوشل ویلفیئر، کلچر، سپشل ایریاز، خوراک و زراعت، صنعت و پیداوار ، ایرا و معدنیات کے شعبوں کیلئے فنڈز جاری کئے ہیں۔

پلاننگ کمیشن کے حکام کے مطابق حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ مالی سال 2017-18 ء کے دوران ترقیاتی اہداف کاحصول ممکن بنانے کے لئے تمام مالی ادارے، ڈویژنز اور منصوبوں پر کام کرنے والے ادارے ان منصوبوں کی فہرستیں فراہم کریں تاکہ عوامی مفاد کی حکومتی پالیسی کو مدنظر رکھ کر ان منصوبوں کو ترجیحی بنیادوں پر اسی سال مکمل کیا جائے۔

(جاری ہے)

واضح رہے کہ حکومت نے رواں مالی سال کے دوران وفاقی و صوبائی ترقیاتی منصوبوں کے لئے 2513بلین روپے مختص کئے ہیں یہ بلند ترین تخمینہ ملک کی تاریخ میں پہلی دفعہ ممکن بنایا گیا ہے جو پچھلے سال کی نسبت 25 فیصد زیادہ ہے۔

موجودہ حکومت ملک میں توانائی بحران پر قابو پانے کے لئے ہر ممکن اقدامات یقینی بنا رہی ہیں جس کا اندازہ اس بات سے لگایاجا سکتا ہے کہ سی پیک منصوبے کی74 فیصد فنڈز بجلی سکیموں کیلئے مختص کئے جا چکے ہیں۔ مزید براں، ایل این جی و قدرتی گیس کی در آمد، ملک کے اند ر پائپ لائنز بچھانے، 3600 میگاواٹ ایل این جی سے بجلی بنانے ، 4500 میگاواٹ داسو، 4500 میگاواٹ دیا میر اور 969 میگاواٹ نیلم جہلم منصوبوں کی شروعات و تکمیل حکومت کی ان اقدامات کی عکاس ہے جس کا مقصد ملک میں بجلی بحران کا خاتمہ ہے۔