میشا شفیع علی ظفر پر جنسی ہرساں کیا جانے کا الزام لگانے کے بعد مذاق بن گئیں

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان اتوار اپریل 12:45

میشا شفیع علی ظفر پر جنسی ہرساں کیا جانے کا الزام لگانے کے بعد مذاق ..
لاہور(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔22اپریل 2018ء) معروف گلوکارہ میشا شفیع نے ساتھی گلوکار علی ظفر پر جنسی ہراساں کیا جانے کا الزام عائد کیا تھا۔جس کے بعد شوبز انڈسٹری سے تعلق رکھنے والے لوگوں نے بھی اس متعلق اپنی رائے کا اظہار کیا۔اسی کے اوپر تبصرہ کرتے ہوئے معروف صحافی ایاز میر کا کہنا تھا کہ میشا شفیع ایک بہت معروف گلوکارہ ہیں جب کہ علی ظفر بھی بہت معروف گلوگار ہیں۔

اور ان کا چھوٹا سا طبقہ ہے ۔جب شام کو ان کی پا رٹیاں ہوتی ہیں تو پتہ نہیں اس میں ان کو کباب کے ساتھ کیا چیز پیش کی جاتی ہے۔جب آپ ایسی محفلوں میں جائیں گے تو وہاں اگر کوئی آپ پر کوئی جملے کسے تو وہ جنسی ہراساں کیا جانے کے زمرے میں نہیں آتا۔لیکن اب تو کسی کا ہاتھ بھی پکڑ لیں تو اس ہر جنسی ہراساں کیا جانے کا الزام لگا دیا جاتا ہے۔

(جاری ہے)

ایاز میر کا مزید کہنا تھا کہ ایک اور خاتون نے علی ظفر پر الزام عائد کیا کہ انہوں نے سلیفی لیتے ہوئے میری کمر کو نا زیبا طریقے سے چھوا جب کہ ایک خاتون کا کہنا تھا کہ علی ظفر اچھی گفتگو نہیں کرتے جس کے بعد میں نے اپنے میک اپ روم میں جا کر خواتین سے کہا کہ یہاں تو کوئی ایسا آدمی نہین ہے نہ جو اچھی گفتگو نہیں کرتا؟ ؟جس کے بعد میک اپ روم میں تمام لڑکیاں ہسنے لگ گئیں۔

مزید کیا کہا ویڈیو میں ملاحظہ کیجئے:

متعلقہ عنوان :