Sang Tarash - Joke No. 1622

سنگ تراش - لطیفہ نمبر 1622

ایک نیا شادی شدہ جوڑا ہوٹل میں ٹھہرا ہوا تھا۔ دلہن غضب کی خوبصورت تھی جیسے چاندنی مجسم ہو گئی ہو اور دولہا اس پر نثار ہو رہا تھا۔ کمرے کی دیواریں پتلی تھیں اور برابر کے کمرے میں دو شہدے قسم کے نوجوان ٹھہرے ہوئے تھے دولہا نے محبت بھرے لہجے میں کہا۔ سوچتا ہوں کہ کراچی سے کسی سنگ تراش کو بلوا کر تمہارا مجسمہ بنواؤں لمحہ بعد انکے کمرے کے دروازے پر دستک ہوئی۔ شوہر نے پوچھا۔ کون؟جواب ملا کراچی کے دوسنگ تراش؟

مزید لطیفے

کچھ بچا بھی؟

kuch bacha bhi

ضمیر

Zameer

کلرک اپنے افسر سے

clerk apne officer se

فوٹو

photo

ریلوے سٹیشن

railway station

ڈاکٹر اور مریض

doctor aur mareez

استاد

Ustaad

ماں بیٹے سے

Maa bete se

شرط

shart

شاہراہ

shahrah

کتے کا بچہ

kuttay ka bacha

دعویٰ

Daewa

Your Thoughts and Comments