شریف خاندان پرسعودی عرب کے احسانات کاقرض ریاست نہیں چکاسکتی۔یمن میں فوج بھیجنے کے فیصلے کی مزاحمت کی جائے گی ،صاحبزادہ محمدحامدرضا

پیر مارچ 16:54

فیصل آباد(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔30مارچ۔2015ء) سنی اتحادکونسل پاکستان کے چیئرمین صاحبزادہ محمدحامدرضانے کہاہے کہ شریف خاندان پرسعودی عرب کے احسانات کاقرض ریاست نہیں چکاسکتی۔یمن میں فوج بھیجنے کے فیصلے کی مزاحمت کی جائے گی ۔ یمن کابحران شیعہ سنی کولڑانے کی امریکی سازش ہے ۔ وزارت خارجہ کو بوڑھے مشیروں کے ذریعے چلایاجارہاہے۔قوم کوحکمرانوں کے دعوے ،وعدے اورنعرے بہلانہیں سکتے۔

نااہل اورنالائق وزیروں کی چھٹی کروائی جائے۔حکمران امریکی وسعودی خوشنودی کے لئے قومی مفادات قربان نہ کریں۔پاکستان یمن کے بحران کے حل کے لئے سفارتی کردراداکرے ، ان خیالات کااظہارانہوں نے سنی اتحادکونسل کی سپریم کونسل کے ممبر پیر میاں غلام مصطفی گجر سے ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

(جاری ہے)

صاحبزادہ حامدرضا نے مزید کہاکہ پاکستانی حکومت پرائی جنگ میں کودنے سے گریز کرے۔

یمن کے مسئلے کو فرقہ واریت کارنگ نہ دیاجائے ۔ مسلم حکمران یمن کے بحران کے حل کے لئے مصالحتی کرداراداکریں ۔سعودی عرب کے ڈیڑھ ارب ڈالرکے بدلے پاکستانی فوج کویمن بھیجناملک دشمنی ہے ۔نوازشریف سعودی احسانات کابدلہ چکانے کے لئے ملک کی سلامتی داوٴپرنہ لگائیں ۔امریکہ مشرق وسطیٰ میں بدامنی پھیلاکراسرائیل کے عزائم پورے کرناچاہتاہے پاکستان پرائی لڑائی لڑنے کامتحمل نہیں ہوسکتا۔دہشت گردوں کے لئے آپریشن ضرب عضب دراصل ضرب غضب بن چکاہے۔حضورنبی کریم ﷺ کی تلوارسے محروم آپریشن ضرور کامیاب ہوگا۔

متعلقہ عنوان :