نوبیل انعام یافتہ پاکستانی ملالہ یوسفزئی کی اگلی کتاب پناہ گزین خواتین کی زندگی اور ان کی داستان پر مبنی ہوگی

ملالہ کو 2014 میں محض 17 برس کی عمر میں امن کے نوبیل انعام سے نوازا گیا تھا ،ْرپورٹ

منگل مارچ 13:47

نوبیل انعام یافتہ پاکستانی ملالہ یوسفزئی کی اگلی کتاب پناہ گزین خواتین ..
نیویارک (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 13 مارچ2018ء) نوبیل انعام یافتہ پاکستانی ملالہ یوسفزئی کی اگلی کتاب پناہ گزین خواتین کی زندگی اور ان کی داستان پر مبنی ہوگی۔کتاب شائع کرنے والے ادارے ویڈین فیلڈ اینڈ نکولسن کے مطابق ملالہ یوسفزئی کی اگلی کتاب وی آر ڈسپلیسڈکے نام سے رواں برس ستمبر 4 کو شائع کی جائے گی۔دی بک سیلر کی ایک رپورٹ کے مطابق یہ کتاب ملالہ یوسفزئی کی زندگی کے ذاتی اور پناہ گزینوں کے کیمپوں کے دورے سے حاصل ہونے والے تجربات کے گرد گھومتی ہے، جس کے حوالے سے ملالہ کو امید ہے کہ وہ اس بحران اور اعدادوشمار کے گورکھ دھندے کے پس پردہ انسانیت کی کہانیوں کو سامنے لے کر آئیں گی۔

ملالہ کتاب کے ذریعہ اٴْن مختلف لڑکیوں کے تجربات کو سامنے لائیں گی جنہوں نے بے گھر ہو کر مشکلات کا سامنا کیا اور وہ کیسے پناہ گزین کیمپوں میں زندگی گزار رہی ہیں۔

(جاری ہے)

واضح رہے کہ اس سے قبل ملالہ یوسفزئی کی کتاب 'آئی ایم ملالہ'' بھی شائع ہوکر بیسٹ سیلنگ کتاب کا درجہ اختیار کرچکی ہے۔۔ملالہ کی ایک اور کتاب ملالاز میجک پینسل ہے جو انہوں نے اپنے بچپن سے متاثر ہو کر لکھی تھی جس کی اب تک 5321 کاپیاں پوری دنیا میں فروخت ہوچکی ہیں۔

یاد رہے کہ 20 سالہ ملالہ کو 2012 میں سوات میں کالعدم تحریک طالبان پاکستان نے حملے کا نشانہ بنایا تھا جس کے بعد وہ بیرون ملک منتقل ہوگئیں اور اس وقت برطانیہ کی آکسفورڈ یونیورسٹی میں زیر تعلیم ہیں۔۔ملالہ کو 2014 میں محض 17 برس کی عمر میں امن کے نوبیل انعام سے نوازا گیا تھا۔۔ملالہ یوسفزئی خواتین کے حقوق اور تعلیم کے لیے ہمیشہ اپنی آواز بلند رکھتی ہیں اور خواتین کو با اختیار بنانے کے لیے مسلسل کوشاں ہیں۔

متعلقہ عنوان :