دبئی ، جنسی تعلق استوار کرنے کے بعد گرل فرینڈ کو برہنہ حالت میں فلیٹ کے باہر باندھ کر چھوڑ جانے پراماراتی شخص کو سخت سزا سنادی گئی

تین سال جیل کی سزا برقرار

Sadia Abbas سعدیہ عباس منگل مئی 16:04

دبئی ، جنسی تعلق استوار کرنے کے بعد گرل فرینڈ کو برہنہ حالت میں فلیٹ ..
دبئی  (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ یکم مئی 2018ء)  دبئی عدالت میں پیر کے روز ایک آدمی کو خاتون کے ساتھ جنسی تعلق استوار کرنے کے بعد برہنہ حالت میں اسکے فلیٹ کے باہر باندھ کر بھاگ جانے کے الزام میں لایا گیا ۔ مزید تفصیلات کے مطابق آدمی نے عدالت میں خود پر لگائے جانے والے تمام الزام کی تردید کر دی ہے ۔ گزشتہ سال نومبر میں دبئی عدالت نے ایک 40 سالہ امارتی کارکن کو جنوری 2017 میں ایک اُزبک خاتون کے ساتھ جنسی زیادتی کرنے کے بعد اسے مارپیٹ کر برہنہ حالت میں فلیٹ کے باہر باندھ کر چھوڑ جانے پر تین سال جیل کی سزا سنائی تھی ۔

امارتی شہری کو عدالت میں پیش نہ ہونے پر اسکی غیر موجودگی میں ہی سزا سنا دی گئی تھی ۔ تاہم سزا کے بعد آدمی نے عدالت سے رجوع کیا اور اپیل دائر کی کہ اس پر لگائے جانے والے الزامات بے بنیاد ہیں اور اسنے اُزبک خاتون کے ساتھ اُسکی مرضی سے جنسی تعلق استوار کیا تھا، اسنے خاتون کے ساتھ کوئی زور زبردستی نہیں کی تھی اور نہ ہی اسے برہنہ حالت میں فلیٹ کے باہر چھوڑا تھا ۔

(جاری ہے)

تاہم امارتی شہری عدالت کو اپنی بے گناہی کے ثبوت فراہم کرنے میں ناکام رہا ہے لہذا عدالت نے گزشتہ روز کیس کی سنوائی کے دوران امارتی شہری کی تین سالہ سزا میں کسی قسم کی کمی نہیں کی ۔ امارتی شہری ابھی بھی سپریم کورٹ میں اپیل کا حق رکھتا ہے ۔

متعلقہ عنوان :