برطانیہ یورپی یونین سے علیحدگی کے معاملے میں تاخیری حربوں کے استعمال سے باز رہے، میشل بارنیا

پیر مئی 10:20

برسلز ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 مئی2018ء) یورپی یونین نے بریگزٹ میں تاخیری حربوں کے استعمال پر برطانوی حکومت کو سخت وارننگ دی ہے۔ عالمی ذرائع ابلاغ کے مطابق بریگزٹ مذاکرات میں شریک یورپی یونین کے اعلی مذاکرات کار میشل بارنیا نے برطانوی حکومت سے کہا ہے کہ وہ یورپی یونین سے علیحدگی کے معاملے میں تاخیری حربوں کے استعمال سے باز رہے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ برطانوی حکام، یورپی یونین کے متحدہ قانونی ڈھانچے کو درک کرنے میں ناکام رہے ہیں۔میشل بارنیا نے واضح کیا کہ برطانوی حکام کو یہ سمجھنا چاہیے کہ یورپی یونین سے علیحدگی کے بعد برطانیہ کو بہت سی سہولتوں سے محروم ہونا پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ یورپی یونین اور برطانیہ کے درمیان بہت سے معاملات پر ابہام پایا جاتا ہے اور ہم اس سلسلے میں مذاکرات کے لیے تیار ہیں۔ یورپی یونین سے برطانیہ کی علیحدگی کا عمل مارچ 2019ء تک مکمل ہو جانا چاہیے۔