لارڈز ٹیسٹ میں کامیابی کے باوجود حریف سائیڈ کو کمزور سمجھنے کی غلطی ہرگز نہیں کر یں گے

،دوسرے میچ میں سیریز جیتنے کیلئے میدان میں اتریں گے اور لیڈز ٹیسٹ میں کامیابی حاصل کرکے نئی تاریخ رقم کریں گے قومی ٹیم کے فاسٹ بالر حسن علی کا انٹرویو

بدھ مئی 22:34

لارڈز ٹیسٹ میں کامیابی کے باوجود حریف سائیڈ کو کمزور سمجھنے کی غلطی ..
لندن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) قومی ٹیم کے فاسٹ بالر حسن علی نے کہا ہے کہ لارڈز ٹیسٹ میں کامیابی کے باوجود حریف سائیڈ کو کمزور سمجھنے کی غلطی ہرگز نہیں کر یں گے ،دوسرے میچ میں سیریز جیتنے کیلئے میدان میں اتریں گے اور لیڈز ٹیسٹ میں کامیابی حاصل کرکے نئی تاریخ رقم کریں گے۔ اپنے ایک انٹرویو میں حسن علی نے کہا کہ قومی کرکٹ ٹیم لارڈز ٹیسٹ جیتنے کے باوجود حریف ٹیم کو کمزور سمجھنے کی غلطی ہرگز نہیں کرے گی۔

پاکستانی ٹیم کو اگر دوسرا ٹیسٹ بھی جیتنا ہے تو اس کے لیے نئے سرے سے محنت کرنا ہوگی کیونکہ لارڈز کے مقابلے میں لیڈز کی کنڈیشنز زیادہ مشکل ثابت ہو سکتی ہیں۔ دوسرے ٹیسٹ میں ہر کرکٹر کو اپنی 100فیصد کارکردگی کا مظاہرہ کرنا ہو گا کیونکہ پہلے ٹیسٹ کی جیت ماضی کا حصہ بن گئی اور اب اس کی بنیاد پر حد زیادہ خود اعتمادی کا شکار ہونا قومی کرکٹ ٹیم افورڈ نہیں کر سکتی ہے۔

(جاری ہے)

ہم میدان میں اس عزم کے ساتھ ہی اتریں گے کہ یہ سیریز دو،صفر سے اپنے نام کرنی ہے۔لیڈز ٹیسٹ میں کامیابی حاصل کرکے ہی ایک نئی تاریخ رقم کی جا سکتی ہے اورہم اس سنہری موقع کا فائدہ اٹھانا چاہتے ہیں۔ حسن علی کا مزید کہنا تھا کہ اپنے ناقدین کو خاموش کرنے کا اچھی کارکردگی سے بہتر طریقہ کوئی اور ہو بھی نہیں سکتا ہے۔ یاد رہے کہ لارڈز ٹیسٹ میں فاسٹ بالر حسن علی نے پہلی اننگز میں 4وکٹیں حاصل کرکے انگلینڈ کو 184رنز پر آٹ کرنے میں اہم کردار ادا کیا تھا۔

واضح رہے کہ پاکستان اور انگلینڈ کا دوسرا ٹیسٹ یکم جون سے لیڈز میں شروع ہوگا،گرین شرٹس نے لارڈز میں کھیلے گئے پہلے ٹیسٹ میچ میں انگلینڈ کو 9وکٹوں سے شکست دے کر سیریز میں 1-0کی برتری حاصل کی ہے اور اگر لیڈز ٹیسٹ بھی اپنے نام کرنے میں کامیاب رہی تو پہلی مرتبہ انگلینڈ کو اس کی سرزمین پر وائٹ واش کرنے کا کارنامہ سر انجام دے گی ۔

متعلقہ عنوان :